site
stats
پاکستان

سندھ میں تعلیم سے متعلق کمیٹی تشکیل

کراچی: وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے تعلیم سے متعلق کمیٹی تشکیل دے دی۔ کمیٹی اسکول ایجوکیشن اسٹینڈرڈز 2013 کا جائزہ لے گی۔

تفصیلات کے مطابق وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت تعلیمی اصلاحات سے متعلق اجلاس ہوا۔ اجلاس میں اساتذہ کے اصلاحاتی بل پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

اس موقع پر وزیر اعلیٰ کا کہنا تھا کہ ہر 5 سال بعد تمام اساتذہ کے ٹیسٹ ہوں گے۔ آئندہ 4 سال میں ٹیچرز ٹریننگ اکیڈمی قائم کریں گے۔ اساتذہ کی تقرری تھرڈ پارٹی کے ذریعے میرٹ پر ہوگی۔

انہوں نے مزید کہا کہ اساتذہ کو ٹریننگ کورسز کوالیفائی کرنے ہوں گے۔ جن اساتذہ کی ناقص کارکردگی رہی انہیں فارغ کردیا جائے گا۔ ’5 سالوں میں ہمیں اسکولوں کا ماحول بہتر کرنا ہے۔ تعلیم کو بہتر ہی نہیں بلکہ اعلیٰ معیار کا کرنا چاہتا ہوں‘۔

انہوں نے کہا کہ میں اگلے 10 سالوں کے لیے تعلیمی اصلاحات بنانا چاہتا ہوں۔ 1 لاکھ 50 ہزار اساتذہ کو تربیت دے کر بہترین استاد بنانا ہے۔ اسکول کا کم سے کم معیار بھی نئے قانونی اصلاحات میں مقرر کریں۔

اجلاس میں وزیر اعلیٰ سندھ نے تعلیم سے متعلق کمیٹی بھی تشکیل دے دی۔ کمیٹی میں وزیر قانون، وزیر تعلیم، سیکریٹریز تعلیم فضل اللہ پیچوہو، عبدالعزیز اور سیکریٹری قانون شامل ہیں۔

مذکورہ کمیٹی اسکول ایجوکیشن اسٹینڈرڈز 2013 کا جائزہ لے گی۔ کمیٹی کرکیولم بل 2015 کا بھی جائزہ لے کر سفارشات دے گی۔

وزیر اعلیٰ نے ہدایت کی کہ مجوزہ کمیٹی ایک ہفتے کے اندر اپنا روڈ میپ دے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top