15.4 C
Ashburn
اتوار, مئی 19, 2024
اشتہار

ایفل ٹاور میں لگنے والی ہوشربا آگ کی حقیقت کیا ہے؟

اشتہار

حیرت انگیز

پیرس میں واقع ایفل ٹاور میں دنیا بھر کے سیاحوں کے لیے خاص کشش رکھتا ہے، اس میں آگ لگنے کی ویڈیو نے لوگوں کو کافی تشویش میں مبتلا کردیا ہے۔

فرانس کے مشہور و معروف سیاحتی مقام پر آگ لگنے کی ویڈیو ان دنوں سوشل میڈیا پر کافی وائرل ہو رہی ہے جس میں دیکھا جاسکتا ہے کہ آگ کے ہوشربا شعلوں نے ایفل ٹاور کو اپنی لپیٹ میں لے لیا ہے۔

ویڈیو میں واضح طور پر ایفل ٹاور کو بھرپور طریقے سے آگ میں لپٹا دیکھا جاسکتا ہے اور اس کے اوپر والے حصے سے کافی زیادہ شعلے بلند ہورہے ہیں۔

- Advertisement -

یہ ویڈیو ’ٹک ٹاک‘ ایپ پر جاری کی گئی تھی جس کو اب تک 4 ملین سے زائد افراد دیکھ چکے ہیں جبکہ 50 ہزار سے زائد لائکس بھی مل چکے ہیں۔ ویڈیو میں اس منظر کو وہاں بہت سے لوگ اور پولیس اہلکار بھی دکھائی دے رہے ہیں۔

اس حوالے سے لوگ سوشل میڈیا پر سوال کرتے نظر آرہے ہیں کہ ایفل ٹاورمیں آگ لگنے کی بات میں صداقت ہے یا نہیں؟

غیر ملکی میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ اس خبر میں کوئی صداقت نہیں ہے اور یہ ویڈیو آرٹیفیشل انٹیلی جنس ٹول کی مدد سے بنائی گئی ہے۔

اس خبر کی تردید کرتے ہوئے انکشاف کیا گیا کہ یہی ویڈیو گزشتہ سال 18 جولائی کو ایک یوٹیوب چینل پر بھی اپ لوڈ کی گئی تھی جس کے کیپشن میں سی جی آئی (کمپیوٹر جنریٹڈ ایمیجنری) لکھا گیا تھا۔ یعنی اس کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ ایفل ٹاور کے آفیشل سائٹس پر بھی اس طرح کی کوئی خبر موجود نہیں ہے اور نہ ہی ملکی میڈیا نے اس حوالے سے رپورٹ کیا ہے۔

Comments

اہم ترین

ویب ڈیسک
ویب ڈیسک
اے آر وائی نیوز کی ڈیجیٹل ڈیسک کی جانب سے شائع کی گئی خبریں

مزید خبریں