The news is by your side.

عمران خان کو ایک اور بڑی کامیابی مل گئی

پشاور: الیکشن ٹریبونل نے ضمنی انتخابات این اے 22 کے لیے عمران خان کے کاغذات نامزدگی درست قرار دے دیئے۔

تفصیلات کے مطابق پشاور کے الیکشن ٹربیونل میں این اے 22 ضمنی انتخابات میں پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کی کاغذات نامزدگی کیخلاف کیس کی سماعت ہوئی۔

وکیل درخواست گزار نے کہا کہ عمران خان کے اثاثے 3کروڑ سے 30 کروڑ تک کیسے پہنچے، عمران خان نے اضافی اثاثوں کو ظاہر نہیں کیا۔

وکیل الیکشن کمیشن محسن کامران نے بتایا کہ قانون میں ایک سے زیادہ حلقوں سے الیکشن پر پابندی نہیں۔

جس پر عمران خان کے وکیل بیرسٹر گوہر خان نے کہا کہ عمران خان استعفی دے چکے ہیں، اب اسمبلی کےرکن نہیں ہے، اسمبلی کےرکن بھی ہیں تو قانون میں پھر بھی کوئی پابندی نہیں۔

جسٹس اعجاز انور کا کہنا تھا کہ توشہ خانہ اشیا2018 میں ملے تو کیوں ابھی تک ظاہر نہیں کئے، بیرسٹر گوہر خان نے بتایا کہ ذاتی استعمال کی اشیا الیکشن کمیشن کے سامنے ظاہر نہیں کی جاتیں، عمران خان نے بینک اسٹیٹمنٹ میں ان کی قیمت ڈکلیئر کی ، عمران خان القادر ٹرسٹ کے بینفشری نہیں۔

اپیلیٹ ٹربیونل نےعمران خان کے کاغذات نامزدگی کیخلاف درخواست خارج کرتے ہوئے ضمنی انتخابات این اے 22 کے لیے عمران خان کے کاغذات نامزدگی درست قرار دے دیے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں