The news is by your side.

Advertisement

بجلی کی لوڈشیڈنگ سے شہری پریشان، کے الیکٹرک کا وضاحتی بیان

کراچی: ترجمان کے الیکٹرک نے کہا ہے کہ فرنس آئل اور گیس کی فراہمی میں کمی کے باعث پیداواری صلاحیت متاثر ہے، بجلی چوروں کی وجہ سے بھی لوڈشیڈنگ ہوتی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے مختلف علاقوں میں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے باعث شہری شدید برہم ہیں، لوگوں نے مطالبہ کیا ہے کہ لوڈشیڈنگ کا مسئلہ فوری طور پر حل کیا جائے۔

ردعمل میں ترجمان کے الیکٹرک نے وضاحت کی کہ بجلی چوری والے علاقوں میں لوڈشیڈ سے زیادہ فالٹس اور ٹرپنگ کے مسائل ہیں، بجلی چوری والے علاقوں میں کنڈوں کے باعث پی ایم ٹی اوورلوڈ ہوتی ہے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ بجلی کی طلب بڑھنے کے باعث کنڈوں کا استعمال کے الیکٹرک کے انفرااسٹرکچر کو نقصان پہنچتا ہے۔

کے الیکٹرک کی لوڈشیڈنگ سے قرنطینہ میں مریضوں کی حالت خراب

خیال رہے کہ شہرقائد کے مختلف علاقوں میں کہیں 12، کہیں 14 اور کہیں 18 گھنٹے لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے، نہ صرف عوام سخت اذیت میں مبتلا ہو گئے ہیں بلکہ قرنطینہ میں رکھے گئے کرونا انفیکشن کے مریضوں کی حالت بھی شدید گرمی کے باعث خراب ہونے لگی ہے۔

کراچی کے علاقوں اتحاد ٹاؤن، قائم خانی کالونی، گلشن غازی، ملیر، نوسی کالونی، عیسیٰ نگری، لانڈھی، گلشن ظہور، ابی سینا لائن، نصرت بھٹو کالونی، بلدیہ، گلشن حدید، احسن آباد، گڈاپ کے درجنوں گوٹھوں اور کاٹھور میں 12 سے 14 گھنٹے لوڈ شیڈنگ ہونے لگی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں