The news is by your side.

Advertisement

سری لنکا: عبوری صدر نے آتے ہی ایمرجنسی نافذ کر دی

کولمبو: سری لنکا کے عبوری صدر نے بھی آتے ہی ایمرجنسی کا اعلان کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق سری لنکا میں ایمرجنسی کا نفاذ کر دیا گیا، قائم مقام صدر رانیل وکرمے سنگھے نے ملک میں جاری معاشی بد حالی کے درمیان عوام کے غصے سے بچنے اور امن و امان کی صورت حال کو قابو رکھنے کے پیشِ نظر ملک میں ایک بار پھر سے ہنگامی حالت نافذ کر دی ہے۔

سری لنکا گزشتہ کئی مہینوں سے شدید اقتصادی اور سیاسی بحران سے نبرد آزما رہا ہے، ملک خوراک، ایندھن اور ادویات سمیت دیگر ضروری اشیا کی شدید قلت جیسے مسائل سے دو چار ہے، ان وجوہ کے سبب ملک میں اب بھی شدید بے چینی پائی جاتی ہے۔

مشکلات کی وجہ سے عوام میں سیاسی قیادت کے خلاف اس قدر غم و غصہ اور ناراضی ہے کہ اس کے نتیجے میں صدر گوٹابایا راجا پاکسے کو ملک سے فرار ہونے پر مجبور ہونا پڑا۔

سری لنکا میں معاشی بحران؛ ہوٹل کا مالک پاپڑ فروخت کرنے پر مجبور

گزشتہ ہفتے ملک سے فرار ہونے کے بعد انھوں نے پارلیمنٹ کو اپنا استعفیٰ بھیجا، جسے گزشتہ جمعے کے روز تسلیم کر لیا گیا، ان کے استعفے کے بعد وزیر اعظم کے طور پر خدمات انجام دینے والے وکرمے سنگھے نے عبوری صدر کے طور پر حلف اٹھایا ہے۔

سری لنکن عوام اب نئے صدر رانیل کو بھی گھر بھیجنے کے لیے احتجاج کر رہے ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں