The news is by your side.

Advertisement

میڈیکل کالجوں میں داخلے کے خواہشمند طلبا کیلئے بڑی خبر

اسلام آباد : پاکستان میڈیکل کمیشن کا کہنا ہے کہ میڈیکل وڈینٹل کالجز کیلئے داخلہ امتحان اکتوبر کے دوسرے ہفتے ہوگا، امتحان میں پاسنگ مارکس 60 ہوں گے جبکہ سرکاری میڈیکل کالجز میں داخلہ امتحان ہرسال نومبراور دسمبرمیں ہوں گے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان میڈیکل کمیشن کے پہلے اجلاس میں اہم فیصلے کئے گئے، اعلامیے میں کہا گیا کہ ہے کہ میڈیکل وڈینٹل کالجز کیلئے داخلہ امتحان اکتوبر کے دوسرے ہفتے ہوگا، نمز کو ایف ایس سی سلیبس کے مطابق امتحانات کیلئے اختیارات حاصل ہوں گا ، طلبا داخلہ امتحان کیلئے نمز کے اعلان کردہ نصاب کا استعمال کر سکتے ہیں۔

اعلامیے میں کہا ہے کہ میڈیکل وڈینٹل کالجز کے داخلہ امتحان میں پاسنگ مارکس60ہوں گے جبکہ لائسنسنگ سےمتعلق درخواستیں آن لائن پورٹل پرجمع کرائی جاسکیں گی۔

پاکستان میڈیکل کمیشن نے داخلہ وفیس منظم کرنے کیلئے داخلہ پالیسی21-2020 کی منظوری دے دی اور کہا تاخیر کا شکار لائسنسنگ کا آغاز کرکے عمل 4 ہفتوں میں مکمل کیا جائے گا۔

اعلامیے میں کہا گیا کہ ڈاکٹر شائستہ ذیشان کو عارضی بنیادوں پر سیکرٹری پی ایم سی مقرر کردیا ہے جبکہ رضاشاہ عارضی ڈائریکٹرآئی ٹی پاکستان میڈیکل کمیشن تعینات کیا گیا ہے۔

پاکستان میڈیکل کمیشن نے انتظامی امور کیلئے کمیٹیاں تشکیل دے دیں ، ایچ آر، فنانس کمیٹی، امتحانات کمیٹی اور لاوریگولیشن کمیٹی تشکیل دی گئی۔

پاکستان میڈیکل کمیشن کا کہنا ہے کہ سرکاری میڈیکل کالجز میں داخلہ امتحان ہرسال نومبراور دسمبرمیں ہوں گے اور نجی میڈیکل کالجزکی فیسیں پی ایم سی کے پاس جمع کرائی جائیں گی جبکہ کرغزستان کے تمام میڈیکل کالجز کو بلیک لسٹ میں شامل کیا گیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں