The news is by your side.

Advertisement

ایتھوپیا : گھروں میں سوئے ہوئے لوگوں پر حملہ، سو سے زائد افراد قتل

بینی شنگل گومز: ایتھوپیا میں نامعلوم مسلح افراد نے گھروں پر حملے کرکے سو سے زائد افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا، مقتولین گھروں میں سو رہے تھے، فوج نے جوابی کارروائی میں 42 دہشت گردوں کی ہلاکت کا دعویٰ کیا ہے۔

ایتھوپیا کے انسانی حقوق کمیشن کی رپورٹ کے مطابق مغربی ایتھوپیا کے شہر بینی شنگل گومز میں نامعلوم مسلح افراد کے حملے میں 100 سے زیادہ افراد ہلاک ہوگئے ہیں جبکہ ایتھوپیا کی فوج نے حملے میں ملوث 42 مسلح افراد کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مسلح افراد نے بیکوزی کیبلے، بولین وریڈا اور میٹیکل کے علاقوں میں اس وقت حملہ کیا جب لوگ اپنے گھروں میں سو رہے تھے۔

ایک مقامی میگزین نے عینی شاہد کے حوالے سے بتایا کہ لوگوں کا قتل کیا گیا اور ان کے گھروں میں لوٹ مار کی گئی، علاقے کے باشندوں نے پولیس کو حملے کی اطلاع دی تھی لیکن پولیس کے پہنچنے سے پہلے حملہ آور فرار ہوچکے تھے۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ ایتھوپیا کے مغربی علاقے میں متعدد قبائلی گروہ آباد ہیں یہاں حملہ آور امہارا برادری کے لوگوں کو اپنا نشانہ بناتے ہیں۔

دوسری جانب ایتھوپیا کی فوج نے مسلح حملے میں ملوث 42 مسلح افراد کو ہلاک کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔ ایتھوپیا کے ہیومن رائٹس کمیشن نے حملے کی تصدیق کرتے ہوئے تحقیقات کا مطالبہ کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں