The news is by your side.

Advertisement

برطانوی پارلیمنٹ میں کوکین استعمال کیے جانے کا انکشاف

لندن: برطانوی پارلیمنٹ کے اندر کوکین استعمال کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے، پارلیمنٹ ہاؤس میں 9 جگہوں پر کوکین استعمال کرنے کے شواہد پائے گئے۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق برطانوی پارلیمنٹ میں کوکین کا نشہ کیا جانے لگا، پارلیمنٹ ہاؤس کی 9 جگہوں پر کوکین استعمال کرنے کے شواہد پائے گئے ہیں اور ان میں 4 جگہوں پر صرف ممبر پارلیمنٹ ہی جاسکتے ہیں۔

سروے رپورٹ کے مطابق پارلیمنٹ ہاؤس کے باتھ روم، بار اور دیگر جگہوں پر کوکین کے پیکٹس برآمد ہوئے ہیں، کنزرویٹو پارٹی نے حال ہی میں غیرقانونی ڈرگس کے استعمال کے خلاف بیان دیا تھا۔

کنزرویٹو ممبر صوبائی اسمبلی مائیکل گوو نے اعتراف کیا کہ انہوں نے متعدد بار آئس نشہ استعمال کیا اور پہلی بار اُس وقت آئس نشہ کیا تھا جب وہ نوجوان صحافی تھے، جبکہ راری اسٹیورتھ کا کہنا تھا کہ انہوں نے ایران دورے کے موقع پر ایک شادی کی تقریب میں منشیات استعمال کی۔

مزید پڑھیں: موبائل میں‌ کوکین سے متعلق میسج پر برطانوی سیاح کی امریکا سے ملک بدری

سیکریٹری خارجہ جیریمی ہنٹ، ڈومینک راب اور اینڈرا لیڈسوم نے اعتراف کیا کہ ماضی میں ہم افیون کا استعمال کرچکے ہیں جبکہ وزیر داخلہ ساجد جاوید نے اس قسم کے کسی بھی نشے کے استعمال سے انکار کردیا۔

برطانوی وزارت عظمیٰ کی دوڑ میں شامل سابق وزیر خارجہ بورس جانسن نے کہا کہ میں نے ان میں سے کئی چیزوں کا لطف اٹھایا ہے لیکن انہوں نے کوکین کے استعمال پر متضاد بیانات پیش کیے۔

خیال رہے کہ بورس جانسن اس سے قبل بی بی سی سے گفتگو میں 2005 میں دوستوں کے ساتھ ایک بار کوکین کے استعمال کا انکشاف کیا تھا لیکن پھر اگلے ہی لمحے انہوں نے اسے مذاق قرار دیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں