The news is by your side.

Advertisement

مریخ سے مزید حیران کن معلومات موصول

مریخ پر مختلف خلائی مشنز بھیجے جانے کے بعد سے اس سیارے کے بارے میں نئی نئی معلومات افشا ہورہی ہیں، اور حال ہی میں اس سرخ سیارے کے حوالے سے مزید معلومات موصول ہوئی ہیں۔

حال ہی میں ہونے والی ایک نئی تحقیق سے علم ہوا کہ مریخ کی جس جگہ پر چین کا روور ژورونگ اترا ہے وہاں ہوا اور ممکنہ طور پر پانی کے کٹاؤ کے واقعات رونما ہوئے ہوں گے، جو سرخ سیارے کی سطح کی خصوصیات کے بارے میں مزید ثبوت فراہم کرتے ہیں۔

رواں ہفتے نیچر جیو سائنس نامی جریدے میں شائع ہونے والی اس تحقیق میں ژورونگ کی جانب سے مریخ کے پہلے 60 دنوں میں جمع کیے گئے ڈیٹا کا تجزیہ کیا جس کے دوران اس نے تقریباً 450 میٹر کا سفر کیا۔

چین کے ہاربن انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی کے ماہرین کی ٹیم نے ڈنگ لیانگ کی سربراہی میں روور کے کیمروں کے ذریعے لی گئی چٹانوں کا مطالعہ کرنے کے بعد اس بات کا مشاہدہ کیا کہ مریخ کی مٹی میں ہوا کے کٹاؤ کے اثرات اور نشانات کے ثبوت موجود ہیں۔

انہوں نے سرخ سیارے کی سطح پر پہاڑوں، لہروں اور کٹے ہوئے گڑھوں کی بناوٹ کا بھی مشاہدہ کیا جو اس بات کی نشاندہی کرتے ہیں کہ یہ جگہ طویل عرصے سے ہوا کی موجودگی کی وجہ سے موسمی اثرات کی زد میں رہی ہے۔

تحقیق کے مطابق، ہوا کے کٹاؤ کے علاوہ، ماہرین نے کچھ چٹانوں کی ساخت کا بھی مشاہدہ کیا جن کے نمکین پانی کے ساتھ تعامل کا ثبوت ملتا ہے۔

چین کا مریخ پر موجود روور شمسی توانائی سے چلنے والا 6 پہیوں والا روبوٹ ہے جس کا وزن 240 کلو گرام ہے۔ اس کی متوقع عمر کم از کم 90 مریخی دن ہے، جو زمین پر تقریباً 3 ماہ کے برابر ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں