The news is by your side.

Advertisement

برطانوی کرائم ایجنسی نے کس پاکستانی کو گرفتار کیا؟ اے آر وائی نے پتہ لگالیا

کراچی : منی لانڈرنگ کے کیس میں  برطانوی نیشنل کرائم ایجنسی (این سی اے) کی کارروائی میں ایک پاکستانی کی گرفتاری اور رہائی کے معاملے پر اے آر وائی نیوز نے  پاکستانی شخصیت کے نام کاپتہ لگالیا۔

ذرائع کے مطابق برطانیہ میں گرفتار شخص کا نام فرحان جونیجو ہے، مذکورہ شخص ٹڈاپ اسکینڈل کا مرکزی کردار ہے، یہ شخص ٹڈاپ اسکینڈل میں امین فہیم کا فرنٹ مین تھا، اس اسکینڈل میں یوسف رضاگیلانی کا بھی نام شامل ہے۔

سال2013میں فرحان جونیجو نے ٹڈاپ میں فراڈ کر کے رقم لوٹی اور پاکستان سے امریکا فرار ہوگیا تھا، فرحان نے دبئی ،امریکا، سوئٹزرلینڈ کے بعد رقم برطانیہ منتقل کی، برطانیہ میں مانیٹرنگ کے بعد فرحان جونیجو کوگرفتار کیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ ٹڈاپ اسکینڈل میں سات ارب روپے کی رقم حوالہ و ہنڈی کے ذریعےامریکا بھجوائی گئی تھی، فرحان جونیجو نے 750ملین کی رقم بیرون ملک منتقل کی تھی، یہ رقم والدہ، بہن، بھائی اور بیوی کے مشترکہ اکاؤنٹ میں منتقل کی گئی تھی۔

فرحان جونیجو یوسف رضاگیلانی، مرحوم امین فہیم کا قریبی ساتھی تھا۔ تفتیشی ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ فرحان جونیجو سندھ حکومت سے ڈیپوٹیشن پر وزارت تجارت میں ڈائریکٹر تعینات تھا۔

مزید پڑھیں: برطانیہ میں منی لانڈرنگ کے الزام میں پاکستانی سیاسی شخصیت کی گرفتاری و رہائی

اس کے پاس پاکستان کے ساتھ ساتھ برطانوی شہریت بھی تھی، ایف آئی اے نے اس سے تفتیش کے دوران حوالہ و ہنڈی کامقدمہ بھی درج کیا تھا۔

واضح رہے کہ برطانوی نیشنل کرائم ایجنسی کے افسران نے کچھ دن قبل پاکستان کا دورہ بھی کیا، دورے کے دوران ایف آئی اے منی لانڈرنگ کیس سے متعلق بات چیت ہوئی، ذرائع کے مطابق ملاقات میں جعلی اکاؤنٹس کیس سے متعلق لندن جانے والی رقوم کا بھی ذکر کیا گیا،این سی اے نے منی لانڈرنگ پرمدد کرنے کی خود سے پیشکش کی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں