The news is by your side.

Advertisement

‘فریال تالپور اور وزیراعلیٰ سندھ عزیربلوچ سےملاقاتیں کرتےتھے’

کراچی: سابق سیکٹر کمانڈر سندھ رینجرز بریگیڈیئر (ر) باسط شجاع نے کہا ہے کہ پی پی رہنماؤں کےعزیربلوچ سے رابطےتھے، فریال تالپور اور وزیراعلیٰ سندھ عزیربلوچ سےملاقاتیں کرتےتھے۔

ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے بریگیڈیئر(ر)باسط شجاع نے کہا کہ ذوالفقار مرزانےلیاری گینگ وارکاساتھ دیاتھا، 2013میں آپریشن میں گینگسٹر ثاقب باکسر مارا گیا تو قادرپٹیل نے اس کے بعد سندھ رینجرز کا محاصرہ کیاتھا، آپریشن میں گینگسٹرمارےگئے اور قادرپٹیل نےلاشیں رکھ کراحتجاج کیا۔

انہوں نے بتایا کہ قادرپٹیل اور لیاری کےلوگوں نے شاہراہ کو لاشیں رکھ کربندکردیاتھا، لیاری آپریشن میں بہت سےلوگ بھاگے اور پکڑے گئے،کراچی کےجرائم میں سیاسی گٹھ جوڑکسی سے ڈھکا چھپا نہیں، کراچی میں تمام کالعدم تنظیموں کےلوگ سیاسی تنظیموں سےمنسلک ہوتےتھے۔

بریگیڈیئر(ر)باسط شجاع کے مطابق عزیربلوچ نے تسلیم کیا وہ افسران کے تبادلے کراتا تھا عزیربلوچ کو کچھ سیاسی لوگ تحفظ دے رہےتھے اور کچھ سیاسی لوگوں کی مددسے وہ ملک سےباہربھاگ گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ جےآئی ٹی رپورٹ 2016میں مکمل ہوگئی تھی جسے 2020تک دبا کر رکھا گیا،2018سےجےآئی ٹی رپورٹ کوپبلک نہیں کیاگیا مگر اب رپورٹ سندھ ہائی کورٹ کےاحکامات کےبعدپبلک ہوئی۔

سابق سیکٹرکمانڈرسندھ رینجرز کا مزید کہنا تھا کہ نیٹوکا اسلحہ بھی لیاری میں گیا اس علاقے میں بہت اسلحہ جمع ہوگیاتھا، ایم 16رائفلز میں نے خود لیاری سے پکڑیں تھیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں