The news is by your side.

Advertisement

کرونا وائرس: موت سے قبل مریض کے آخری خط نے سب کو اشکبار کردیا

امریکا میں کرونا وائرس میں مبتلا والد کے مرنے سے قبل آخری خط نے سب کو اشکبار کردیا، 32 سالہ جون ایک ماہ سے اس وائرس سے لڑ رہا تھا۔

امریکی ریاست کنیکٹی کٹ کے رہائشی جون کوئیلو میں ایک ماہ قبل کرونا وائرس کی علامات ظاہر ہوئیں جس کے بعد انہیں اسپتال منتقل کیا گیا، جون 20 دن تک وینٹی لیٹر پر رہا لیکن جانبر نہ ہوسکا اور بالآخر یہ جنگ ہار گیا۔

جون نے اپنی اہلیہ اور 2 بچوں کے لیے ایک رقت آمیز خط چھوڑا ہے۔

اپنے خط میں جون نے اپنی اور اہلیہ کے نام لکھا کہ آپ سب کی وجہ سے میں بہترین زندگی گزار سکا، آپ سب کا بہت شکریہ۔

اپنی اہلیہ کے لیے انہوں نے لکھا کہ تم ایک بہترین انسان ہو، میرے بعد زندگی اسی جوش و جذبے کے ساتھ گزارنا جو تمہاری شخصیت کا خاصہ ہے۔

خیال رہے کہ کرونا وائرس نے امریکا میں تباہی کی تاریخ رقم کردی ہے، اب تک 52 ہزار افراد اس وائرس کے ہاتھوں ہلاک ہوچکے ہیں، ملک بھر میں جان لیوا کا شکار افراد کی تعداد 9 لاکھ سے تجاوز کر چکی ہے۔

امریکا سمیت دنیا بھر میں 28 لاکھ سے زائد افراد اس وائرس کا شکار ہوچکے ہیں جبکہ ہلاکتوں کی تعداد 1 لاکھ 97 ہزار ہوچکی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں