The news is by your side.

Advertisement

کارکردگی دکھانے کے باوجود سلیکٹ نہ کیے جانے پر فواد عالم پھٹ پڑے

کراچی: ٹیسٹ کرکٹر فواد عالم نے ڈومیسٹک سیزن میں کارکردگی دکھانے کے باوجود سلیکٹ نہ کیے جانے پر خاموشی توڑ دی۔

تفصیلات کے مطابق قومی ٹیم کے مڈل آرڈر بلے باز فواد عالم نے کہا ہے کہ شاید ذاتی پسند نہ پسند ہی ہے جس کی وجہ سے مجھے کارکردگی کے باوجود ٹیم میں شامل نہیں کیا جارہا ہے۔

کرکٹر فواد عالم کا کہنا تھا کہ یوں لگتا ہے کہ پسند ناپسند ہے اور ایسا نظر بھی آرہا ہے اس میں زیادہ کچھ کہنے کی ضرورت نہیں ہے۔

ڈومیسٹک سیزن میں 56 کی اوسط سے 11830 رنز اسکور کرنے والے فواد عالم نے کہا کہ مجھے بھی سلیکٹ نہ کیے جانے والے سوالات کے جواب کی تلاش ہے کہ ٹیم میں کیوں منتخب نہیں ہوپارہا ہوں اور مجھ میں کیا کمی موجود ہے۔

فواد کا کہنا تھا کہ ہر سال دو سال بعد ایک نیا جواز پیش کردیا جاتا ہے اور وہ اس پر کام کرنا شروع کردیتے ہیں تو نیا مطالبہ سامنے آجاتا ہے۔

مزید پڑھیں: فواد عالم کو ٹیم میں شامل ہونا چاہئے تھا، یونس خان

واضح رہے کہ فواد عالم نے حالیہ ڈومیسٹک سیزن کی 9 اننگز میں 2 سنچریاں اور ایک نصف سنچری اسکور کی ہے، فرسٹ کلاس کیریئر میں ان کی مجموعی سنچریوں کی تعداد 32 ہوچکی ہے۔

34 سالہ بلے باز کا کہنا تھا کہ جب کوئی کھلاڑی ٹیم سے ڈراپ ہوتا ہے تو اس کی کوشش ہوتی ہے کہ وہ ڈومیسٹک میں اچھا پرفارم کرکے ٹیم میں کم بیک کرے اور ان کی بھی یہی کوشش ہے مگر پرفارمنس تو دے رہا ہوں لیکن سلیکٹرز کی نظروں سے اوجھل ہوں۔

تجزیہ کاروں کا کہنا ہے کہ قومی ٹیسٹ ٹیم میں مصباح اور یونس کے جانے کے بعد اسد شفیق اور بابر اعظم پر بھاری ذمہ داری عائد ہوگئی ہے اگر فواد عالم میں ٹیسٹ ٹیم میں شامل کیا جاتا ہے تو اس سے ٹیسٹ ٹیم کا مڈل آرڈر مضبوط ہوجائے گا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں