The news is by your side.

Advertisement

سپریم کورٹ نوٹس نہ لیتی تو یہ مقدمات ختم ہوجاتے، فواد چوہدری

اسلام آباد : تحریک انصاف کے رہنما فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ سپریم کورٹ نوٹس نہ لیتی تویہ مقدمات ختم ہوجاتے، امید ہے اب ان کیسز کو کوئی نقصان نہیں پہنچے گا۔

تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے رہنما فواد چوہدری نے اداروں میں حکومتی مداخلت کے حوالے سے سپریم کورٹ کے حکم پر اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا انصاف کی فراہمی کیلئے یہ سپریم کورٹ کا سب سے بڑا قدم ہے۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ انھوں نے اقتدار میں آکر سب سے پہلے تفتیشی ٹیم تبدیل کی ریکارڈ بدلا ، حکومت میں آکر پراسیکیوشن کا وکیل بھی اپنا لگادیا، ان کے اپنے خلاف مقدمات میں دونوں طرف ان کے اپنے ہی وکیل ہیں۔

سابق وزیر نے کہا کہ سپریم کورٹ نوٹس نہ لیتی تو یہ مقدمات تو ختم ہوگئے تھے، امید ہے اب ان کیسز کو کوئی نقصان نہیں پہنچے گا اور سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعدعدالتوں پرعوام کااعتماد بڑھے گا۔۔

ان کا کہنا تھا کہ عدلیہ کے وقار کی بحالی میں وکلا نے اہم کرداراداکیاہے، تاثر پر نہیں بلکہ شواہد اورشہادتوں پر سپریم کورٹ نے ازخود نوٹس لیا اور حکومت کے پاس سپریم کورٹ کے سوالات کاکوئی جواب نہیں تھا۔

فواد چوہدری نے وزیرداخلہ کو مشورہ دیا کہ اپنے مقدمات میں میرٹ پر چلنے دیں مداخلت نہ کریں ، یہ اچانک گھبرا گئے ہیں اور یہ ایسے اقدامات کریں گے کہ ملک کو نقصان ہوگا۔

زرداری کے حوالے سے انھوں نے کہا کہ ماضی میں آصف زرداری کے مقدمات کا ریکارڈ ہی غائب ہوگیا تھا، آصف زرداری نے ماضی میں خود کو عدالتوں سے کلین چٹ دلوائی، ان دو خاندانوں نے پاکستان پر ظلم اور سسٹم کو تباہ کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں