تحریک انصاف ملک کی بڑی جماعت ہے لیکن اکثریتی پارٹی نہیں، مولانا فضل الرحمان -
The news is by your side.

Advertisement

تحریک انصاف ملک کی بڑی جماعت ہے لیکن اکثریتی پارٹی نہیں، مولانا فضل الرحمان

کراچی : جمیعت علمائے اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے کہا ہے کہ میرے صدارتی امیدوار ہونے پر پی پی سے بات جاری ہے، پی ٹی آئی بڑی جماعت ہے لیکن اکثریتی پارٹی نہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے کراچی کنگری ہاؤس میں پیر پگارا سے ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، صدارتی مشن پر کراچی میں موجود صدارتی امیدوار مولانا فضل الرحمان نے جی ڈی اے اور ایم کیو ایم رہنماؤں سے ملاقاتیں کی ہیں۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ صدارتی انتخاب کے معاملے میں ن لیگ اور پیپلز پارٹی میں ٹینشن پیدا ہوگئی تھی، مجھے کہا گیا تھا کہ آپ برج کا کردار ادا کریں، اسی لئے مجھے حزب اختلاف کا کنوینر بنایا گیا۔

دونوں جماعتوں کو دو دن کا موقع دیا کہ ایک امیدوار پر متفق ہوجائیں، صدارتی امیدوار کے لیے اگر ن لیگ اعتزاز احسن کے نام پر متفق ہوجاتی تو ہمیں بھی قبول ہوتا، میرا نام اس لئے آگیا تاکہ پی پی متفق ہوجائے، آصف زرداری سے میرے تعلقات کسی سے ڈھکے چھپے نہیں، میرے صدارتی امیدوارہونے پر پی پی سے بات چیت تاحال جاری ہے۔

اپوزیشن کا مشترکہ امیدوار لانے کا فیصلہ تاخیر سے ہوا، متحدہ اپوزیشن نے مجھے صدارتی امیدوار بنایا ہے، مطمئن ہوں کہ صدارتی انتخاب کا معرکہ سر کرلیں گے۔

ایک سوال کے جواب میں ان کا کہنا تھا کہ حزب اختلاف نے سوچا نمبر زیادہ ہیں تو ہمیں ایوان میں جانا چاہئے، تحریک انصاف اس وقت ملک کی بڑی جماعت ضرور ہے لیکن اکثریتی پارٹی نہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں