The news is by your side.

Advertisement

بچوں کی سالانہ 2لاکھ فیس ادا کرنے والے والدین کی شامت آگئی

لاہور : ایف بی آر نے بچوں کی سالانہ 2لاکھ فیس ادا کرنےوالے مزید 10ہزار والدین کو نوٹسز جاری کر دئیے ، نوٹسز میں آمدن کے ذرائع پوچھے گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق فیڈرل بورڈ آف ریونیو ( ایف بی آر ) نے بچوں کی سالانہ 2لاکھ فیس ادا کرنے والے مزید 10ہزار والدین کو نوٹسز جاری کر دئیے ، نوٹسز میں والدین سے تعلیمی اداروں کی سالانہ 2لاکھ روپے فیس کی ادائیگی کے حوالے سے آمدن کے ذرائع پوچھے گئے ہیں ۔

ایف بی آر کی جانب سے اس سے قبل 16ہزار والدین کو آمدن کے ذرائع کے حوالے سے نوٹسز جاری کئے تھے اور 15 روز میں جواب طلب کیا تھا۔

دوسری جانب نمائندہ پیرنٹس ایسوسی ایشن فیصل صدیقی نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سالانہ دولاکھ روپے فیس جمع کروانے والےوالدین کے لئے ضروری ہے کہ ریٹرن فائل کرتے ہوئے ایڈوانس ٹیکس ظاہر کریں۔

فیصل صدیقی کا کہنا تھا کہ اس قانون کو چیلنج کرنے کیلئےگزشتہ دس ماہ سےسندھ ہائی کورٹ میں پٹیشن فائل کر رکھی ہے، ایڈوانس انکم ٹیکس کٹتا تو ہے لیکن اسکول جمع کرواتا ہے یا نہیں علم نہیں، حکومت والدین کےساتھ اداروں کوبھی کنٹرول کرے۔

یاد رہے ایف بی آر نے 2 لاکھ روپے سالانہ فیس اداکرنے والے والدین کا ریکارڈ مرتب کیا تھا اور کہا تھا 2 لاکھ روپے سالانہ فیس دینے والے اپنے ذرائع آمدن بتائیں، ذرائع آمدن جائز نہ ہوئے تو سخت کارروائی کی جائےگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں