The news is by your side.

Advertisement

وفاقی وزیر نے مستقبل کے شدید خطرے سے آگاہ کردیا

وفاقی وزیر موسمیاتی تبدیلی شیری رحمٰن نے کہا ہے کہ درجہ حرارت بڑھنے سے موسمیاتی مسائل بڑھنے کا خدشہ ہے،2025 تک پاکستان کی قلت کا شکار ہوجائے گا۔

وفاقی وزیر موسمیاتی تبدیلی شیری رحمٰن نے اپنے بیان میں کہا کہ گرین ہاؤس گیسز کی وجہ سے ماحول میں آلودگی آرہی ہے، جیسے جیسے دنیا کا درجہ حرارت بڑھ رہا ہے ہمارا بھی بڑھتا جارہا ہے، درجہ حرارت بڑھنے سے پانی کی قلت کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے، خدشہ ہے کہ 2025 تک پاکستان پانی کی قلت کا شکار ہوجائے گا، وزیراعظم سے گزارش کرونگی کہ کلائمنٹ چینج پر اجلاس بلائیں۔

انہوں نے کہا کہ خیبرپختونخوا میں بلین ٹری سونامی اب بھی چل رہاہے جس پر بہت سارے سوالات اٹھے ہیں اس پر نیب نےبھی انکوائری شروع کردی ہے، اس سے متعلق بہت کام کی ضرورت ہے، صوبہ سندھ نے شجرکاری مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا۔

شیری رحمٰن نے مزید کہا کہ انتقام کی سیاست پر یقین نہیں رکھتے، ملک کے بہتر مستقبل کیلئے ہم سب کو مل کر کام کرنے کی ضرورت ہے، آگے بڑھنے کیلئے باہمی اعتماد اور مشاورت سے چلنا ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں