The news is by your side.

Advertisement

وفاق بلوچستان کو سوئی گیس سے حاصل آمدنی کا 40 فی صد دینے پر راضی

کوئٹہ: وفاق بلوچستان کو سوئی گیس سے حاصل آمدنی کا 40 فی صد دینے پر راضی ہو گیا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق بلوچستان حکومت اور پی پی ایل کے درمیان سوئی گیس فیلڈ سے گیس نکالنے کے معاہدے میں پیش رفت ہوئی ہے۔

بلوچستان حکومت اور پی پی ایل میں معاہدہ 5 سال سے تعطل کا شکار تھا، اب وفاق بلوچستان کو سوئی گیس سے حاصل آمدنی کا 40 فی صد دینے پر راضی ہو گیا ہے۔

وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال کی منظوری کے بعد اب جلد معاہدہ طے پا جانے کا امکان ہے، محکمہ توانائی حکام کا کہنا ہے کہ معاہدے سے صوبے کو سالانہ 5 سے 6 ارب روپے کی آمدنی ہوگی۔

رواں سال بلوچستان کی ترقی پر 200 ارب روپے خرچ کیے جائیں گے، اسد عمر

محکمہ توانائی حکام کے مطابق اس معاہدے کے بعد بلوچستان کو 20 ارب روپے بھی مل جائیں گے، یہ رقم 5 سال سے پی پی ایل پر واجب الادا تھی۔ یاد رہے کہ حکومت بلوچستان اور پاکستان پیٹرولیم لمیٹڈ کے درمیان جون 2015 میں ڈیرہ بگٹی سے سوئی گیس کی فراہمی کے لیے معاہدہ ہوا تھا۔

واضح رہے کہ رواں ماہ 5 تاریخ کو وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی اسد عمر کی زیر صدارت بلوچستان میں ترقیاتی کاموں سے متعلق اجلاس میں کہا گیا تھا کہ رواں سال بلوچستان کی ترقی پر 200 ارب روپے خرچ کیے جائیں گے۔

اجلاس میں جنوبی بلوچستان کی ترقی کے لیے فاسٹ ٹریک بنیاد پر پروگرام تیار کرنے کی ہدایت بھی کی گئی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں