The news is by your side.

Advertisement

القدس پر ظلم ہوتا دیکھ کر خود کو تنہا محسوس کرتے ہیں، ترک صدر

انقرہ : ترک صدر نے القدس سے متعلق گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عالم اسلام اپنے بعض مسائل میں الجھا ہوا ہے جس کے باعث عالمی سطح پر آج تک کوئی اہم فیصلہ نہیں کراسکے۔

تفصیلات کے مطابق ترک صدر رجب طیب اردوان نے کہا ہے کہ القدس کا دفاع مسلمانوں کی اجتماعی ذمہ داری ہے، بعض اوقات جب ہم فلسطینیوں اور القدس پر ظلم ہوتا دیکھتے ہیں تو خود کو تنہا محسوس کرتے ہیں۔

فلسطینی میڈیا کے مطابق اسلامی تعاون تنظیم کے سماجی امور سے متعلق وزارتی اجلاس سے خطاب میں صدر اردوآن نے کہا کہ اس وقت عالم اسلام اپنے بعض اندرونی مسائل میں الجھا ہوا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارے وسائل اور توانائی ضائع ہو رہی ہے، ہم اپنے اپنے حجم اور تعداد کے باوجود عالمی سطح پر کوئی موثر فیصلہ نہیں کرا سکے ہیں۔

ترک صدر کا کہنا تھا کہ بعض اوقات جب ہم فلسطینیوں اور القدس پر ظلم ہوتا دیکھتے ہیں کہ ہم خود کو تنہا محسوس کرتے ہیں، عالمی استعمار اپنی پالیسیوں پر چل رہا ہے اور عالم اسلام اپنے اندرونی خلفشار میں الجھا ہوا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم مسلمانوں کو یہ بات نہیں بھولنی چاہیے کہ القدس کا دفاع ہماری اجتماعی ذمہ داری ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں