The news is by your side.

Advertisement

ایف آئی اے نے سپریم کورٹ سے اصغر خان کیس بند کرنے کی سفارش کردی

اسلام آباد: سپریم کورٹ میں اصغر خان عمل در آمد کیس سےمتعلق سماعت ہوئی ، ایف آئی اے نے کیس کی فائل بند کرنے کی سفارش کردی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ میں اصغرخان عمل درآمد کیس کی سماعت کے موقع پر سپریم کورٹ میں ایک رپورٹ جمع کرائی گئی، جس میں ناکافی شواہد کے سبب کیس بند کرنے کی استدعا کی گئی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایف آئی اے کے پاس اتنے شواہد نہیں ہیں کہ مقدمے میں نامزد ملزمان کے خلاف فوجداری کارروائی ہو سکے ،جن سیاستدانوں پر الزام تھا، انہوں نے رقم کی وصولی سے انکار کردیا ہے۔

ایف آئی اے کی جانب سے جمع کرائی گئی رپورٹ میں مزید کہا گیا کہ اہم گواہان کے بیانات میں وقفےہیں ،گواہوں کے بیانات ایک دوسرے سے نہیں ملتے ۔متعلقہ بینکوں سےپیسہ اکاونٹس میں جمع ہونے کاریکارڈ نہیں ملا، یہ معاملہ 25 سال سے زیادہ پرانا ہے ۔

اصغر خان کیس: سپریم کورٹ 31 دسمبر کوسماعت کرے گا

یاد رہے کہ سپریم کورٹ نے 31 دسمبر کو اصغر خان کیس کی سماعت کی تاریخ مقرر کرتے ہوئے اٹارنی جنرل، ایف آئی اے اور متعلقہ فریقوں کو نوٹسز جاری کیے تھے، کیس کی سماعت چیف جسٹس کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نے کرنی ہے۔

اصغر خان کیس سیاسی رہنماؤں میں کروڑوں روپے تقسیم کرنے کے معاملے سے متعلق ہے ، کہا جاتا ہے کہ نوے کی دہائی میں پیپلز پارٹی کو شکست دینے کے سیاست دانوں کو خطیررقم رشوت میں دی گئی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں