The news is by your side.

Advertisement

مال روڈ پر ریلی ، متحدہ اپوزیشن کے رہنماؤں اور کارکنوں کے خلاف مقدمہ درج

لاہور : مال روڈ پر ریلی نکالنے اور اور جلسہ کرنے پر اپوزیشن جماعتوں کے رہنماؤں اورکارکنوں کے خلاف پرچہ کٹ گیا، ایف آئی آر میں شہباز شریف، قمرزمان کائرہ سمیت دوہزار رہنماؤں اور کارکنوں کو نامزد کیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اپوزیشن جماعتوں کو بغیر اجازت مال روڈ پر ریلی نکالنا اور جلسہ کرنا مہنگا پڑگیا، متحدہ اپوزیشن کی جانب سے لاہور مال روڈ پر بغیر اجازت جلسہ کرنے کیخلاف دو مختلف تھانوں میں پانچ مقدمات درج کر لئے گئے، ایس ایچ او تھانہ سول کی مدعیت میں مقدمہ درج کیاگیا۔

مسلم لیگ نون کے صدر شہباز شریف، پیپلز پارٹی وسطی پنجاب کے صدر قمر زمان کائرہ سمیت 2 ہزار افراد کیخلاف تین مقدمات درج کر لئے ہیں۔

جس میں مختلف دفعات لگائی گئی ہیں، ایف آئی آرز میں 58 افراد نامزد جبکہ دیگر نامعلوم ہیں، جن کی شناخت سی سی ٹی وی کیمروں اور ٹی وی فوٹیج کے ذریعے کی جائے گی جبکہ دو مقدمات تھانہ قلعہ گجر سنگھ میں درج کئے گئے ہیں۔

ایف آئی آر میں لکھا گیاہے کہ احتجاج کےشرکاء نے ڈنڈے اٹھارکھے تھے، مال روڈ کو چاروں اطراف سے بلاک کیا، جس سےٹریفک کا نظام درہم برہم ہوا، شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

ایف آئی آر کے مطابق احتجاج کے دوران حکومت کے خلاف نعرے بازی کی گئی، اشتعال انگیز تقریریں کی گئیں، پولیس کے منع کرنے پر سیاسی جماعتوں کے کارکنوں نے اہلکاروں سے ہاتھا پائی کی، رکاوٹیں توڑیں اور سرکاری املاک کو نقصان پہنچایا۔

مقدمے میں دفعہ ایک سو سینتالیس، ایک سو انچاس، دوسو نوے، دو سو اکیانوے، تین سو ترپن، ایک سو چھیاسی، چارسوستاسی اور دیگر دفعات شامل ہیں۔

خیال رہے گذشتہ روز متحدہ اپوزیشن نے بغیر اجازت دفعہ 144 کی خلاف ورزی کرتے ہوئے مال روڈ پر ریلی نکالی اور جلسہ کیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں