The news is by your side.

Advertisement

جناح اسپتال میں زیر علاج نگلیریا کا مریض دم توڑ گیا

کراچی: جناح اسپتال کراچی میں زیر علاج نگلیریا کا مریض دم توڑ گیا، اسپتال کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر نے کہا کہ نگلیریا کا مریض علاج کے دوران انتقال کر گیا۔

تفصیلات کے مطابق جناح اسپتال کراچی کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر سیمی جمالی نے کہا ہے کہ اسپتال میں زیرِ علاج نگلیریا کا مریض انتقال کر گیا ہے۔

ڈاکٹرسیمی جمالی کا کہنا تھا کہ مریض کو تیز بخار کی حالت میں جے پی ایم سی لایا گیا تھا، 21 سالہ انیس اسلم کا تعلق اورنگی ٹاؤن سے تھا، رواں سال کا یہ پہلا نگلیریا کیس ہے۔

نگلیریا کے مریض انیس اسلم کو 18 اپریل کو جناح اسپتال لایا گیا تھا، جہاں انھیں آئی سی یو میں رکھا گیا تاہم انھیں بچایا نہیں جا سکا۔

پاکستان میڈیکل ایسوسی ایشن نے شہریوں کو خبردار کرتے ہوئے اپنے بیان میں کہا ہے کہ شہری دوبارہ نیگلیریا کا شکار ہو سکتے ہیں، نگلیریا پانی میں موجود بیکٹیریا کی وجہ سے ہوتا ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  پاکستان میں داخلے پر افغان شہریوں کی پولیو ویکسی نیشن کرنے کا فیصلہ

خیال رہے کہ نگلیریا ایک ایسا امیبا ہے، جو اگر ناک کے ذریعے دماغ میں داخل ہوجائے تو دماغ کو پوری طرح چاٹ جاتا ہے، جس سے انسان کی موت واقع ہوجاتی ہے، یہ عموماً گرم پانی میں تیزی سے پرورش پاتا ہے۔

یہ وائرس عموماً سوئمنگ پولز، تالاب سمیت ٹینکوں میں موجود ایسے پانی میں پیدا ہوتا ہے، جس میں کلورین کی مقدار کم ہوتی ہے، شدید گرمی بھی نگلیریا کی افزائش کا سبب بنتی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں