The news is by your side.

Advertisement

تربت کے علاقے تجابان سے مزید 5 لاشیں برآمد

کوئٹہ : تربت کے علاقے تجابان سے مزید 5 افراد کی لاشیں برآمد ہوئی ، جنہیں فائرنگ کرکے قتل کیا گیا۔

لیویزذرائع کے مطابق بلوچستان کے ضلع کیچ کے شہر تربت کےعلاقے تجابان سے پانچ افراد کی لاشیں ملی ہیں،لاشوں کوشناخت کے لیےاسپتال منتقل دیا گیا۔ جہاں تین لاشوں کی شناخت ہوگئی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ پانچوں افراد کو فائرنگ کرکے قتل کیا گیا ہے ، جاں بحق افراد میں سے تین کی شناخت عثمان قادر، دانش علی اور بدر منیر کے نام سے ہوئی ہے۔

ڈپٹی کمشنر کیچ کا کہنا ہے کہ تینوں کا تعلق پنجاب کے ضلع گجرات سےہے جبکہ دولاشوں کی شناخت کی جارہی ہے۔

وزیراعلیٰ بلوچستان ثنا اللہ خان زہری نے تربت میں 5 افراد کے قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ  انسانیت سوز واقعات بلوچی روایات کے منافی ہیں ، بزدل دہشت گرد معصوم اور نہتے لوگوں کا خون بہا رہے ہیں۔

ترجمان بلوچستان حکومت انورالحق کاکڑ کا کہنا ہے کہ  لاشیں ملنےکی تحقیقات کی جارہی ہیں، ایسا لگتا ہے ان5افرادکاتعلق بھی ان15سےہےجنہیں قتل کیا گیا تھا، تحقیقات جاری ہیں جلد ملزمان کوگرفتارکر لیا جائے گا۔


مزید پڑھیں : تربت سے 15 افراد کی گولیاں لگی لاشیں برآمد


واضح رہے کہ3 روزقبل تربت کے علاقے گروک سے 15 افراد کی لاشیں ملی تھیں، جنہیں گولیاں مار کر قتل کیا گیا تھا، مقتول افراد کا تعلق پنجاب کے مختلف علاقوں سے تھا اور گوجرانوالہ،گجرات،سیالکوٹ ،وزیرآباد،منڈی بہاؤالدین کے رہائشی تھے۔

ترجمان بلوچستان حکومت کا کہنا تھا کہ ایک کالعدم تنظیم نے ویب سائٹ پرذمےداری قبول کی ہے۔

واضح رہے رواں سال مئی میں بلوچستان کے علاقےپیشکان میں نامعلوم افراد نے فائرنگ کر کے 10 مزدوروں کو قتل کردیا تھا۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں