The news is by your side.

Advertisement

انڈونیشیا اور مشرقی تیمور میں قیامت صغریٰ : درجنوں افراد ہلاک ہزاروں گھر تباہ

جکارتا : انڈونیشیا اور مشرقی تیمور میں زبردست طوفانی بارشوں کے بعد آنے والے طوفانی سیلاب نے تباہی پھیلادی، ہزاروں مکانات ریلے میں بہہ گئے، درجنوں افراد کے ہلاک ہونے کی اطلاعات ہیں۔

تفصیلات کے مطابق انڈونیشیا اور اس کے پڑوسی ملک ایسٹ تیمور میں بارش کے بعد آنے والے زبردست سیلاب نے تباہی مچا دی جس کے نتیجے میں ہزاروں افراد کو اپنا گھر بار چھوڑ کر محفوظ مقامات پر منتقل ہونا پڑا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق سیلاب اور چٹانیں کھسکنے کی وجہ سے اب تک کم از کم 100 افراد ہلاک جبکہ درجنوں افراد تاحال لاپتہ ہیں۔

انڈونیشیا کے سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ سیلاب نے انڈونیشیا سے لے کر ایسٹ تیمور کو اپنی زد میں لے لیا۔ اس کی وجہ سے ہزاروں افراد کو محفوظ مقامات پر پناہ لینے کے لیے منتقل ہونا پڑا ہے۔

سیلاب کے باعث ندیوں میں پانی کی سطح کافی بلند ہوگئی ہے جس کی وجہ سے ہزاروں مکانات پانی میں ڈوب گئے ہیں۔ امدادی کارکنان کو متاثرہ کو محفوظ مقامات پر پہنچانے میں کافی مشکلات پیش آئیں۔

انڈونیشیا کے ڈیزاسٹرمینجمنٹ ایجنسی کے ترجمان رادتیا جاتی نے میڈیا کو بتایا کہ اب تک 100افراد کی موت ہوچکی ہے اور اس میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے جبکہ 42 افراد تاحال لاپتہ ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں