The news is by your side.

Advertisement

تائی کوانڈو میں 14 گولڈ میڈلز اپنے نام کرنے والی فائٹر کھلاڑی

کراچی: تائی کوانڈو میں 14 گولڈ میڈلز اپنے نام کرنے والی لاہور کی فائٹر کھلاڑی فلاور ظہیر باجوہ کا کہنا ہے کہ اب وہ بین الاقوامی مقابلوں میں اپنا لوہا منوانا چاہتی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق صوبہ پنجاب کے دارالحکومت لاہور سے تعلق رکھنے والی فلاور ظہیر باجوہ نے اے آر وائی نیوز کے مارننگ شو باخبر سویرا میں شرکت کی۔

فلاور اب تک تائی کوانڈو میں 14 گولڈ میڈلز جیت چکی ہیں، سلور اور برونز میڈلز کی تعداد اس کے علاوہ ہے۔

انہوں نے بتایا کہ ان کے والد نے دیکھا کہ وہ شروع سے ہی اسپورٹس میں اچھی ہیں تو والد نے انہیں بھرپور سپورٹ کیا، انہوں نے بچپن میں جمناسٹکس، باکسنگ اور تائی کوانڈو کیا لیکن جب ان کے والد کو اندازہ ہوا کہ وہ تائی کوانڈو میں سب سے بہترین ہیں تو انہوں نے اسی پر اپنی توجہ مرکوز کرلی۔

ان کے والد نے انہیں اس کی ٹریننگ دلوائی اور صرف 12 سال کی عمر سے فلاور تائی کوانڈو کی باقاعدہ پلیئر بن گئیں۔

فلاور نے بتایا کہ جب وہ 15 سال کی تھیں تو ان کے والد انتقال کر گئے لیکن انہوں نے اپنا کھیل جاری رکھا، آج وہ قومی سطح کے مقابلوں میں 14 گولڈ میڈلز جیت چکی ہیں۔

وہ کہتی ہیں انہیں اس بات کا غم ہے کہ وہ والد کی وجہ سے آج اس مقام پر ہیں لیکن یہ سب دیکھنے کے لیے والد موجود نہیں۔

فلاور کو کھیل کی بنیاد پر اسکالر شپس بھی ملتی رہیں، وہ پنجاب یونیورسٹی سے اپنا بیچلرز بھی مکمل کر چکی ہیں۔

فلاور قومی سطح کے مقابلوں میں اپنا لوہا منوانے کے بعد اب بین الاقوامی سطح کے مقابلوں میں بھی پاکستان کا نام روشن کرنا چاہتی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں