50 لاکھ گھروں کا منصوبہ: چینی کمپنی کی 20 لاکھ گھر تعمیر کرنے کی پیش کش -
The news is by your side.

Advertisement

50 لاکھ گھروں کا منصوبہ: چینی کمپنی کی 20 لاکھ گھر تعمیر کرنے کی پیش کش

اسلام آباد: وزیرِ اعظم عمران خان کے 50 لاکھ گھروں کے بڑے منصوبے میں عالمی کمپنیوں نے دل چسپی ظاہر کر دی ہے، کئی کمپنیوں نے رابطے شروع کر دیے۔

تفصیلات کے مطابق پچاس لاکھ گھروں کی تعمیر کے میگا پروجیکٹ میں عالمی کمپنیوں نے اپنی دل چسپی کا اظہار کر دیا ہے، اس سلسلے میں چین اور متحدہ عرب امارات کی کمپنیوں نے پاکستانی حکام سے رابطے کیے ہیں۔

حکومت نے غیر ملکی کمپنیوں کی پیش کش کا جائزہ لینا شروع کر دیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ متعدد کمپنیوں نے گھروں کی تعمیر کے منصوبے کے سلسلے میں سرمایہ کاری کے لیے حکومتِ پاکستان کو پیش کش بھجوا دیں۔

ذرائع کے مطابق چینی کمپنی نے 20 لاکھ گھر تعمیر کرنے کی پیش کش کر دی ہے، غیر ملکی کمپنیوں کے وفود نے پاکستانی حکام سے ابتدائی مشاورت بھی مکمل کر لی ہے۔

ذرائع نے بتایا کہ غیر ملکی کمپنیوں کو پاکستان کی نئی ہاؤسنگ پالیسی کا انتظار ہے، دوسری طرف حکومت نے غیر ملکی کمپنیوں کی پیش کش کا جائزہ لینا شروع کر دیا ہے۔

پیش کش کرنے والی کمپنیوں کے ماضی کا ریکارڈ اور بلیک لسٹ ہونے کی تحقیقات کی جائیں گی۔


یہ بھی پڑھیں:  پچاس لاکھ گھروں کا منصوبہ، سرکار کی خالی زمینوں کو عوامی مفاد کیلئے استعمال میں لانے کا فیصلہ


یاد رہے کہ ورلڈ میمن آرگنائزیشن کے وفد نے 30 اکتوبر کو وزیرِ اعظم عمران خان کو 50 لاکھ گھروں کی تعمیر کے منصوبے میں تعاون کی پیش کش کی تھی۔

دریں اثنا ہاؤسنگ اسکیم کے تحت 50 لاکھ گھروں کی رجسٹریشن کا عمل شروع ہوچکا ہے، خاندان میں صرف ایک ہی شخص رجسٹریشن کے لیے اہل ہوگا۔

حکومت نے پچاس لاکھ گھروں کے منصوبے کے تحت سرکار کی خالی زمینوں کو عوامی مفاد کے لیے استعمال میں لانے کا بھی فیصلہ کر لیا ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں