The news is by your side.

ارشد شریف کے قتل میں کون ملوث ؟ کینیا کے سابق جی ایس یو ٹرینر کا اہم بیان

نیروبی : سابق جی ایس یو ٹرینر اور سیکورٹی ایکسپرٹ جورج موسیٰ مالی کا کہنا ہے کہ ارشد شریف کے قتل میں جنرل سروس یونٹ کے ملوث ہونے پر شبہ ہے۔

تفصیلات کے مطابق اے آر وائی نیوز کے نمائندہ اقرار الحسن سے بات کرتے ہوئے سابق جی ایس یو ٹرینر اور سیکورٹی ایکسپرٹ جورج موسیٰ مالی نے ارشد شریف کے قتل پر سوالات اٹھادئیے۔

سیکورٹی ایکسپرٹ نے کہا ارشد شریف قتل کیس کو دیکھ رہے ہیں، اس میں جنرل سروس یونٹ کے ملوث ہونے پر شبہ ہے۔

سابق جی ایس یو ٹرینر کا کہنا تھا کہ اس کیس میں جی ایس یو کو طلب کرنا غیر معمول ہے ، جی ایس یو طلب کرنے کیلئے پہلے صدر اور بعد کمانڈر کے آرڈز چاہئیے ہوتے ہیں۔

جورج موسیٰ مالی نے مزید کہا کہ گولیوں کے کھول ایسے ہی چھوڑ دینے لاپروائی ظاہر کرتی ہے، لگتا اس کی منصوبہ بندی کہیں اور ہوئی ہے اور قتل کینیا میں ہوا۔

گذشتہ روز ارشد شریف کی جائے شہادت سے ملنے والے گولیوں کے خول کینین حکام کے حوالے کئے گئے تھے، خول کینیا کے انڈیپینڈنٹ پولیس اوور سائٹ اتھارٹی کو دیے گئے۔

تینوں گولیاں کینیا کی وزارت دفاع کے ماتحت اسلحہ بنانے والی آرڈیننس فیکٹری کی تیار کردہ ہیں، یہ آرڈیننس فیکٹری کینیا کی فوج اور پیراملٹری فورسز کو اسلحہ فراہم کرتی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں