The news is by your side.

Advertisement

سوڈان کے سابق وزیر اعظم صادق المہدی کورونا کے باعث انتقال کرگئے

خرطوم : سوڈان کے سابق وزیر اعظم صادق المہدی کورونا وائرس میں مبتلا ہوکر انتقال کرگئے، وہ گزشتہ تین ہفتے سے متحدہ عرب امارات کے ایک اسپتال میں زیر علاج تھے۔

سوڈان میں جمہوری طور پر منتخب آخری وزیر اعظم 84 سالہ صادق المہدی انتقال کرگئے، ان کے اہل خانہ اور جماعت کی طرف سے جاری بیان کے مطابق کورونا وائرس کے انفیکشن سے متاثر ہونے کے بعد تین ہفتے قبل انہیں متحدہ عرب امارات میں ایک ہسپتال میں داخل کرایا گیا تھا۔

فوج نے 1989میں وزیر اعظم صادق المہدی کا تختہ پلٹ دیا تھا اور ان کی جگہ سابق صدر عمر البشیر کو اقتدار پر بٹھا دیا تھا۔ اقتدار سے معزول کر دیے جانے کے باوجود مہدی سوڈان کی سیاست میں کافی مؤثر شخصیت رہے۔

عمر البشیر کے دور میں مہدی کی اعتدال پسند امّہ پارٹی سب سے بڑی اپوزیشن سیاسی جماعت رہی۔

صادق المہدی کے گھر والوں نے گزشتہ ماہ بتایا تھا کہ کوویڈ۔19 کے ٹیسٹ میں ان کی رپورٹ مثبت آئی تھی اور انہیں سوڈان میں چند دنوں ہسپتال میں رکھنے کے بعد بہتر علاج کے لیے متحدہ عرب امارات منتقل کردیا گیا تھا۔

امّہ پارٹی نے ایک بیان میں کہا کہ مہدی کی تدفین جمعے کے روز سوڈان کے عمد رمان شہر میں کی جائے گی۔

اطلاع کے مطابق صادق المہدی مسلسل 65 سال سے زیادہ عرصے تک سوڈانی سیاست اور عوامی زندگی میں ایک انوکھی شخصیت  تھے۔ المہدی نے سوڈان میں اہم تبدیلیوں اور ملک کو ترقی کی راہ پر گامزن کرنے کے ضمن میں بہت اہم کردار ادا کیا

المہدی ایک برس طویل خود ساختہ جلاوطنی کے بعد دسمبر 2018 میں سوڈان واپس لوٹ آئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں