The news is by your side.

Advertisement

مداحوں کی دعائیں رنگ لے آئیں، سابق کرکٹر اسپتال سے ڈسچارج

لاہور: ڈاکٹرز کی کاوش اور مداحوں کی دعائیں رنگ لے آئیں، سابق ٹیسٹ کرکٹر توصیف احمد کو اسپتال سے ڈسچارج کردیا گیا ہے۔

سابق ٹیسٹ کرکٹر توصیف احمد گذشتہ اتوار کو شادی کی تقریب میں شرکت کے لیےکراچی سےلاہور آئے، شادی کی تقریب میں ہی انہیں دل کا دورہ پڑا، جس کے فوری بعد انہیں طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کیا گیا۔

وزیراعظم کی ہدایت پر سابق ٹیسٹ کرکٹر کی صحت سے متعلق ایک میڈیکل بورڈ بھی تشکیل دیا گیا، میڈیکل بورڈ کی روشنی میں ان کی انجیو گرافی کی گئی، انجیو گرافی رپورٹ کے مطابق سابق کرکٹر کے دل کی تین نالیوں میں مسائل کی نشاندہی ہوئی۔

بعد ازاں توصیف احمد کی کامیاب انجیو پلاسٹی کی گئی اور انہیں دو اسٹنٹ ڈالے گئے۔

تاہم آج طبیعت میں بہتری کے باعث سابق ٹیسٹ کرکٹر توصیف احمد کو اسپتال سے ڈسچارج کردیا گیا ہے، تاہم ڈاکٹرز نے انہیں سفر سے منع کیا ہے، جس کے باعث وہ نیشنل ہائی پرفارمنس سینٹر میں قیام کرینگے۔

یہ بھی پڑھیں:  سابق کرکٹر توصیف احمد دل کا دورہ پڑنے پر اسپتال منتقل

ڈاکٹرز کی جانب سے سفر کی اجازت ملنے کے بعد وہ کراچی کے لئے روانہ ہونگے۔

توصیف احمد کے خاندان اور بھتیجے سیف الدین نے مداحوں کی جانب سے ان کے لئے دعائے صحت کرنے پر اظہار تشکر کیا ہے۔

واضح رہے کہ 62 سالہ توصیف احمد نے آف اسپنر کی حیثیت سے34 ٹیسٹ اور 70 ایک روزہ میچوں میں پاکستان کی نمائندگی کی اور بالترتیب 93 اور 55 وکٹیں حاصل کیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں