The news is by your side.

Advertisement

ایف بی آر میں بڑے اسکینڈل کا انکشاف، افسران میں ہلچل

لاہور: ٹیکس جمع کرنے والے ملک کے سب سے بڑے ادارے ایف بی آر میں بڑے اسکینڈل کا انکشاف ہوا ہے۔

وفاقی ٹیکس محتسب کے جاری اعلامیے کے مطابق وفاقی ٹیکس محتسب کےاز خود نوٹس کے ذریعے کی گئی تحقیقات کے مطابق ایف بی آر کے ان لینڈر یونیو کے گریڈ 21 کے افسر اور چیف کمشنر کارپوریٹ ٹیکس آفس لاہور چوہدری محمد طارق بھی شامل ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اس کے علاوہ گریڈ اکیس کے افسر چوہدری محمد طارق ،ممبر بے نامی ایڈجیوکیٹنگ اتھارٹی سید ندیم حسین رضوی ، چیف کمشنر بہاولپور ڈاکٹر سرمد قریشی اور ایڈیشنل کمشنر آرٹی او لاہور اشفاق احمد اسکینڈل میں ملوث ہیں ۔

یہ بھی پڑھیں: 38 کروڑ روپے کے 4کروڑ شیئرز کی بے نامی ٹرانزکشن، ایف بی آر کی بڑی کارروائی

میگا کرپشن کے انکشاف پر وفاقی ٹیکس محتسب نے ازخود نوٹس لے کر تحقیقات کروائیں، جس میں چاروں افسران مجموعی طور پربارہ کروڑ تنیس لاکھ چونسٹھ ہزار روپے کے جعلی ٹیکس ریفنڈز میں ملوث پائے گئے۔

رپورٹ میں انکشاف کیا گیا کہ میسرز نیشنل الیکٹرک وائر اینڈ کیبل امپورٹ اینڈ ایکسپورٹ کارپوریشن کو خلاف ضابطہ ریفنڈ دے کر سرکاری خزانے کو بھاری نقصان پہنچایاگیا ہے۔

وفاقی ٹیکس محتسب نے ان افسران کو فوری طور پر موجودہ عہدوں سے ہٹانے اور ان کیخلاف فوجداری اور تادیبی کارروائی کرنے کی ایف بی آر کو ہدایت کی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں