The news is by your side.

Advertisement

کالعدم کردستان ورکرز پارٹی کے ساتھ تصادم، چار ترک فوجی ہلاک

انقرہ : ترکی میں کالعدم کردستان ورکرز پارٹی کے جنگجووں کے ساتھ تصادم میں چار ترک فوجیوں کے مارے جانے کی تصدیق کر دی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق کردستان ورکرز پارٹی ساتھ جھڑپوں کے دوران چھ ترک فوجی زخمی بھی ہوئے۔ پی کے کے یا کردستان ورکرز پارٹی کو ترکی کے علاوہ امریکا اور یورپی یونین نے بھی دہشت گرد تنظیم قرار دے رکھا ہے۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کا کہنا تھا ترک وزارت دفاع نے ایک بیان میں کہاکہ یہ واقعہ ترکی اور عراق کی سرحد کے قریب پیش آیا۔

اطلاعات کے مطابق کالعدم علیحدگی پسند پارٹی کے جنگجووں نے ترکی کے جنوب مشرقی صوبے میں فوجی کیمپ پر حملہ کیا، جس کے بعد فوج نے ان کے خلاف بڑے پیمانے پر کارروائی کا آغاز کر دیا۔

یاد رہے کہ ایک برس قبل ترک فوج نے ملک کے شمال مشرقی علاقے میں ایک فوجی اڈے پر دھاوا بولنے والے 35 کرد جنگجوؤں کو ہلاک کر دیا تھا۔

غیر ملکی میڈیا کا کہنا ہے کہ یہ حملہ عراقی سرحد کے قریب صوبہ ہکاری کے ضلع چوکورجا میں ترک فوجیوں اور جنگجوؤں کے درمیان ہونے والی جھڑپوں کے چند گھنٹے بعد کیا گیا جس میں آٹھ فوجی ہلاک ہوگئے تھے۔

یاد رہے کہ جولائی 2015 میں ترکی کی فوج اور کالعدم کردستان ورکرز پارٹی (پی کے کے) کے درمیان ہونے والے جنگ بندی کا معاہدہ ختم ہوگیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں