The news is by your side.

Advertisement

کون مرد کون عورت: ایک ایسی ایپ جو آپ کی صنف ہی بدل دے

ماسکو: اگر یہ کہا جائے کہ ہم موبائل ایپلی کیشنز کی دنیا میں جی رہے ہیں تو مبالغہ نہیں ہوگا، اب اپنی صنف بدلنے کے لیے بھی ماہرین نے ایپ بنادی ہے۔

ایک صنف سے دوسری صنف میں تبدیلی کے طبی عمل میں بلاشبہ خاصا وقت لگ جاتا ہے اور یہ ایک پے چیدہ عمل ہے، تاہم تصویر میں صنف کی تبدیلی اب محض ایک اشارے کی بات ہوگئی ہے۔

فیس ایپ نامی اس ایپ کے بارے میں کہا جارہا ہے کہ صنفی تبدیلی غالباً اس کی دل چسپ ترین خصوصیت ہے، اور اکثر اس کے نتائج انتہائی حیران کن ہوتے ہیں۔

یہ فلٹرز سے بالکل مختلف انداز میں کام کرتا ہے جسے ہم اسنیپ چیٹ کے ذریعے جانتے ہیں، فیس ایپ اس کی بجائے چہروں کو ’فیشل فیچرز‘ میں ملاکر تبدیل کرتا ہے، لہٰذا یہ ایک بند منھ کو ایک کھلے منھ کی مسکان میں کام یابی سے تبدیل کرسکتا ہے۔

یہ ایپ مصنوعی ذہانت سے کام لیتے ہوئے چہرے کو فیشل فیچرز میں اس طرح ضم کرتا ہے کہ ایک بالکل نئی صورت سامنے آجاتی ہے۔ اس کے لیے یہ نیورل نیٹ ورکس کو استعمال کرتا ہے۔

واٹس ایپ نے اینڈرائیڈ صارفین کی بڑی پریشانی ختم کردی

اب کچھ مشکل نہیں اگر آپ اپنے چہرے کے خال و خد سے بے زار آئے ہوئے ہیں تو ایک ہی اشارے میں ہنستا مسکراتا منھ بنادیں۔

واضح رہے کہ فیس ایپ آئی او ایس اور اینڈرائیڈ کے لیے تیار کیا گیا موبائل ایپلی کیشن ہے، جسے روسی کمپنی وائرلیس لیب نے بنایا ہے۔ اس میں نیورل نیٹ ورک ٹیکنالوجی استعمال ہوتی ہے۔ جس کی وجہ سے تصاویر میں چہروں کی نہایت حقیقی تبدیلی خود بہ خود واقع ہوتی ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں، مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں