The news is by your side.

Advertisement

جارج فلائیڈ کا قتل، مینا پولیس چیف کا اہم بیان سامنے آگیا

نیو یارک : میناپولس کے پولیس چیف نے کہا کہ پولیس آفیسر نے جارج فلائیڈ کی گردن کو دبا کر محکمانہ پالیسی کی خلاف ورزی کی۔

امریکہ میں پولیس کے ہاتھوں سیاہ فام جارج فلائیڈ کے قتل کے معاملہ پر مینا پولیس پولیس چیف نے گردن پر گھٹنا رکھنا پالیسی کے خلاف قرار دے دیا ہے۔

اس حوالے سے مینا پولس پولیس چیف کا اہم بیان سامنے آیا ہے جو انہوں نے مقامی میڈیا کو دیا ان کا کہنا تھا کہ جائے وقوعہ پر موجود پولیس آفیسر ڈیریک شاون نے جارج فلائیڈ کو گرانے کے بعد ان کی گردن کو دبا کر محکمانہ پالیسی کی خلاف ورزی کی تھی۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے سے گفتگو کرتے ہوئے مینا پولس پولیس چیف نے مزید کہا کہ کسی بھی ملزم کی گردن کو گھٹنے سے دبانا پالیسی کا حصہ نہیں اور نہ ہی یہ تربیت کا حصہ ہے۔

یاد رہے کہ امریکی شہر میناپولیس میں پولیس آفیسر کے ہاتھوں سیاہ فام جارج فلائیڈ کی موت ہوئی تھی۔ سیاہ فام امریکی شہری جارج فلائیڈ کی پولیس کے ہاتھوں ہلاکت کے بعد پورے امریکہ میں مظاہرے کیے گئے تھے۔

اس کے بعد دنیا بھر میں جارج فلائیڈ کو انصاف دلانے کے لئے احتجاج و مظاہرہ کا سلسلہ شروع ہوگیا تھا، جس میں متعدد افراد ہلاک اور زخمی بھی ہو گئے تھے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں