The news is by your side.

Advertisement

جرمنی میں لاؤڈ اسپیکرپراذان دینےپرپابندی

برلن : جرمنی کی عدالت نے مقامی جوڑے کی شکایت پرمسجد میں لاؤڈ اسپیکرپر اذان دینے پرپابندی عائد کردی۔

تفصیلات کے مطابق جرمنی کے شہر ڈورٹمنڈ کے نواحی قصبے اوہر ایرکنشویک میں واقع مسجد میں لاؤڈ اسپیکر پراذان دینے پرپابندی عائد کردی گئی۔

مسجد میں لاؤڈ اسپیکر پراذان دینے کے خلاف 69 سالہ ہانس یوآخم لیمہان نے اپنی بیوی کے ہمراہ مقامی عدالت میں درخواست دائر کی تھی۔

درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ اذان میں الفاظ کے ذریعے عقائد کا اظہار کیا جاتا ہے اور اذان سننے والے کو نماز میں شرکت کے لیے مجبورکیا جاتا ہے اور یہ ان کے مسیحی عقائد اور مذہبی آزادی کے منافی ہے۔

عدالت نے مقدمے کا فیصلہ سناتے ہوئے لاؤڈ اسپیکر پراذان دینے پرپابندی عائد کرتے ہوئے کہا کہ حکام نے قواعد وضوابط کو بالائے طاق رکھتے ہوئے مسجد میں لاؤڈ اسپیکرپراذان دینے کی اجازت دی۔

جرمنی کی مقامی عدالت نے درخواست گزار کے اس موقف کی تردید کی کہ اذان ان کی مذہبی آزادی کے خلاف ہے۔


برطانوی ریفری نےاذان کےاحترام میں فٹبال میچ روک دیا


یاد رہے کہ گزشتہ ماہ 27 جنوری کو عالمی شہرت یافتہ برطانوی ریفری مارک کلیٹن برگ نے اذان کے احترام میں میچ روک کرمسلمانوں کے دل جیت لیے تھے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں