جرمنی: مسجد پر حملہ کرنے والے مجرم کو دس سال عمر قید کی سزا: Germany
The news is by your side.

Advertisement

جرمنی: مسجد پر حملہ کرنے والے مجرم کو دس سال عمر قید کی سزا

برلن: جرمنی کی ایک مسجد اور بین الاقوامی کانگریس سینٹر پر دھماکہ خیز مواد سے حملہ کرنے والے مجرم کو عدالت نے دس سال عمر قید کی سزا سنا دی۔

تفصیلات کے مطابق جرمنی کے شہر ڈریسڈن میں قائم ایک مسجد پر ستمبر 2016 میں دھماکہ خیز مواد سے حملہ کیا گیا تھا جس کے باعث مسجد کا بڑا حصہ متاثر ہوا تھا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق مسجد پر حملے میں ملوث ’نینو‘ نامی شخص کو جرمن عدالت نے دس سال عمر قید کی سزا سنائی ہے، مجرم نے دھماکہ خیز مواد ازخود گھر میں تیار کیا تھا۔

جرمن عدالت کی جانب سے مجرم کو آج دس سال سزائے قید کا حکم سنایا گیا ہے، عدالت کے مطابق ملزم پر اقدام قتل، اپنے پاس غیر قانونی طور پر دھماکہ خیز مواد رکھنے اور دو بڑے آتشیں حملے کرنے کے الزامات ثابت ہوگئے ہیں۔

برلن میں انتہاپسندوں نےمسجد پرحملہ کرکےآگ لگادی

خیال رہے کہ مسجد پر مذکورہ حملہ 26 ستمبر 2016 کو کیا گیا تھا تاہم اس حملے میں کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا تھا جبکہ مسجد کے حجرے میں مسجد کے پیش امام اپنے اہلخانہ کے ساتھ موجود تھے۔

واضح رہے کہ مسجد کے سامنے اس بم دھماکے کے کچھ ہی دیر بعد قریب ہی واقع بین الاقوامی کانگریس سینٹر کے سامنے بھی مجرم نے اسی طرح کا ایک اور بم دھماکہ کیا تھا، مجرم کو دو حملوں کے جرم میں سزا سنائی گئی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں