The news is by your side.

Advertisement

گھوٹکی: ڈی ایس پی دفتر کے قریب دھماکا، 4 بچے زخمی

گھوٹکی: صوبہ سندھ کے ضلع گھوٹکی میں ڈی ایس پی کے دفتر کے قریب دھماکا ہوا ہے، جس کے نتیجے میں چا بچے زخمی ہوگئے ہیں۔

گھوٹگی پولیس کی جانب سے جاری بیان کے مطابق دھماکا اوباڑو میں ڈی ایس پی کے دفتر کے قریب ہوا، دھماکے میں چار بچے زخمی ہوئے۔

دھماکے سے متعلق پولیس کا موقف تھا کہ ابتدائی اطلاعات کے مطابق بچے ڈبے سے کھیل رہے تھےکہ دھماکا ہوگیا، دھماکے کے فوری بعد بم ڈسپوزل اسکواڈ کو طلب کرتے ہوئے علاقے کی مکمل ناکہ بندی کردی ہے۔

صورت حال اس وقت مزید پچیدہ ہوئی جب زخمی بچوں کو تحصیل اسپتال اوباڑو منتقل کیا گیا، جہاں اسپتال میں ڈاکٹر موجود نہ ہونےپر شہری مشتعل ہوگئے اور انہوں نے اسپتال میں توڑ پھوڑ شروع کردی اور اسپتال کو شدید نقصان پہنچایا، بعد ازاں شہری زخمی بچوں کو اسپتال لے گئے۔

ایس ایس پی گھوٹکی کا واقعے سے متعلق کہنا تھا کہ ڈی ی ایس پی کے دفتر کےقریب ہونے والے دھماکے کے نتیجے میں چار بچے زخمی ہوئے،زخمی بچوں کو رحیم یار خان اسپتال منتقل کردیا گیا ہے جہاں ان کا علاج جاری ہے۔

ایس ایس پی کا کہنا تھا کہ تفتیش کررہےہیں کہ دھماکا خیز مواد بچوں کے ہاتھ کیسے لگا؟ تحقیقات کے کمیٹی بنادی گئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں:  گھوٹکی: کچرے میں آگ لگنے کے باعث دھماکا، رینجرز اہلکار سمیت 5 افراد زخمی

دوسری جانب آئی جی سندھ نے گھوٹکی میں ڈی ایس پی کےدفتر کےقریب مبینہ دھماکے کا نوٹس لیتے ہوئے ا ایس پی گھوٹکی سےپولیس اقدامات وکارروائی کی تفصیلات طلب کرلیں ہیں۔

واضح رہے گذشتہ سال اگست میں شکار پور اور جیکب آباد میں رینجرز کے ہیڈکوارٹرز کو بم حملوں میں نشانہ بنایا گیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں