The news is by your side.

گلوبل وارمنگ سے مطابقت کا انوکھا طریقہ

دنیا بھر میں رونما ہوتے موسمیاتی تغیرات یعنی کلائمٹ چینج اور اس کی وجہ سے بڑھتا ہوا درجہ حرارت یعنی گلوبل وارمنگ ایک اہم مسئلہ ہے جو انسانی بقا اور معیشت کے لیے بڑا خطرہ ہے۔

تاہم نیدر لینڈز کا شہر روٹر ڈیم اس مسئلے کے ساتھ انوکھے طریقے سے مطابقت کر رہا ہے۔

نیدر لینڈز کا نصف سے زائد رقبہ سطح سمندر سے نیچے ہے۔ صدیوں سے نیدر لینڈز میں نالے اور ندیاں بنائی جارہی ہیں تاکہ بارشوں میں آنے والا پانی ان میں چلا جائے اور شہر خشک رہ سکیں۔

مزید پڑھیں: مشرق سے مغرب تک تباہ کن سیلاب اور طوفان

لیکن اب کلائمٹ چینج کی وجہ سے یہ ملک مزید غیر محفوظ ہوتا جارہا ہے۔ انتظامیہ کو احساس ہے کہ بلند عمارتیں بنانے یا پانی کے آگے پشتے لگانے سے مسئلہ حل نہیں ہوگا، چنانچہ انہوں نے اس مسئلے سے لڑنے کے بجائے اس کے ساتھ مطابقت کرنے کا سوچا۔

ایک منصوبے کے تحت اب روٹر ڈیم میں نئے سرے سے تعمیرات کی جارہی ہیں جس کے بعد شہر کے گیراج، پارک اور اسکوائرز پانی ذخیرہ کرنے کے مقامات بن گئے ہیں۔

بارشوں کے موسم میں جب پانی سمندروں اور دریاؤں کے کناروں سے اچھل کر شہر کے اندر آجاتا ہے تب کشتیوں میں سفر کرنا یا تیراکی کا لباس پہن کر گھر سے نکلنا معمول کی بات بنتا جارہا ہے۔

اس طریقہ کار سے نیدر لینڈز نے ایک بڑے مسئلے کو اپنے لیے ایک بہترین موقع میں بدل لیا ہے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں۔ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہچانے کے لیے سوشل میڈیا پر شیئر کریں۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں