The news is by your side.

Advertisement

گوجرہ اجتماعی زیادتی کیس : ملزمان کا جسمانی ریمانڈ دے دیا گیا

گوجرہ میں موٹروے پر لڑکی سے اجتماعی زیادتی کیس میں گرفتار ملزمان کو گوجرہ کی عدالت میں پیش کر دیا گیا، عدالت نے ملزمان کو چار روز کے جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔

پولیس نے آج زیادتی کے مقدمہ میں نامزد دونوں ملزمان کو مقامی عدالت کے جج عابد اسلام کوڑیاں کی عدالت میں پیش کرکے چودہ روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی۔

عدالت نے گرفتار دونوں ملزمان کو چار دن کے جسمانی ریمانڈ پر پولیس کے حوالے کردیا۔ عدالت نے مذکورہ گرفتار ملزمان کو منگل کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔

پولیس نے دونوں ملزمان حماد احمد اور رحمان کو گزشتہ روز گرفتار کر لیا تھا۔ زیادتی کے مقدمہ میں نامزد شریک ملزمہ لائبہ کو تاحال گرفتار نہیں کیا جا سکا ہے۔

مزید پڑھیں : گوجرہ میں خاتون سے زیادتی کیس کا ایک ملزم گرفتار

واضح رہے کہ ایف آئی آر کے مطابق تین ملزمان حماد، رحمان اور لائبہ نے گارڈن ٹاؤن کی رہائشی اٹھارہ سالہ لڑکی کو نوکری کے انٹرویو کا جھانسہ دے کر کارمیں بیٹھایا اور فیصل آباد موٹر وے ایم فور پر ملزمان نے لڑکی کو زیادتی کا نشانہ بنایا، جس کے بعد ملزمان متاثرہ لڑکی کو فیصل آباد انٹر چینج پر پھینک کر فرار ہو گئے۔

وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے واقعہ کا فوری طور پر نوٹس لیتے ہوئے آئی جی پنجاب اور آر پی او فیصل آباد سے رپورٹ طلب کی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں