The news is by your side.

Advertisement

متحدہ عرب امارات: گولڈن اقامہ ہولڈرز کے لیے نئی سہولتوں کا اعلان

ابو ظہبی: متحدہ عرب امارات میں گولڈن اقامہ ہولڈرز کے لیے نئی سہولتوں کا اعلان کردیا گیا، سکلڈ ملازمین، سرمایہ کاروں، سیلف ایمپلائمنٹ اور خاندان کے افراد کے لیے متعدد سہولتیں فراہم کی گئی ہیں۔

اماراتی میڈیا کے مطابق متحدہ عرب امارات کی حکومت نے گولڈن اقامہ ہولڈرز کے لیے نئی سہولتوں کا اعلان کیا ہے، گولڈن اقامہ ہولڈرز کے لیے امارات میں مسلسل رہنے کی شرط عائد تھی تاہم اب اماراتی حکومت نے یہ شرط منسوخ کردی ہے۔

امارات نے غیر ملکیوں کے اقامے اور داخلے کے لیے نیا نظام جاری کیا ہے، اس کے تحت سکلڈ ملازمین، سرمایہ کاروں، سیلف ایمپلائمنٹ اور خاندان کے افراد کے لیے متعدد سہولتیں فراہم کی گئی ہیں۔

امارات کا کہنا ہے کہ 10 قسم کے ویزے نئے سسٹم میں متعارف کروائے گئے ہیں، آسان شرائط پر متعدد سہولتوں کے ساتھ ویزے جاری ہوں گے۔

نئے نظام کے تحت بغیر ضمانتی والے ویزے ہوں گے، اسی طرح میزبان کے بغیر بھی امارات کا ویزا جاری ہوسکے گا۔

امارات میں وزیٹر کے قیام کی میعاد کے سلسلے میں لچکدار پالیسی اپنائی جارہی ہے، ایک سے زیادہ بار سفر کی سہولت ہوگی۔ 60 دن تک قیام کیا جا سکے گا اور اس میں توسیع بھی ہوسکے گی۔

گولڈن اقامے کے حوالے سے ترامیم کی گئی ہیں اور اس سے فائدہ اٹھانے والوں کا دائرہ وسیع کردیا گیا ہے۔ اقامہ دس سال کا ہوگا اور اس میں توسیع ہو سکے گی۔

گولڈن اقامہ ہولڈر کی وفات کی صورت میں اس کے زیر کفالت اہل خانہ گولڈن اقامے کی باقی ماندہ مدت کے لیے امارات میں قیام کر سکیں گے، گولڈن اقامہ پرمٹ غیر ملکی کے خاندان کے لیے جاری ہوگا جس میں بیوی اور بچے شامل ہوں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں