The news is by your side.

Advertisement

سویڈن کے جزیرے پر صرف ایک فلم بین کے لیے فلمی میلے کا انعقاد

سویڈن کا چھوٹا سا جزیرہ ہامنیس کار 250 میٹر طویل اور 150 میٹر چوڑا ہے جہاں ان دنوں لیزا اینروتھ اور ان کا ایک مددگار عارضی طور پر مقیم ہیں۔ لیزا اینروتھ اس جزیرے پر خاص مہمان ہیں۔

پیشے کے لحاظ سے لیزا اینروتھ نرس ہیں، ان کی عمر 41 برس ہے اور تعلق سویڈن سے ہے، لیکن اس جزیرے پر وہ‌ کسی مریض کی دیکھ بھال یا مرہم پٹّی کرنے کے لیے نہیں‌ آئی ہیں بلکہ وہ اپنا تمام وقت فلم بینی اور سیر و تفریح کرتے ہوئے گزار سکتی ہیں۔ وہ ایک ہفتے تک جزیرے پر‌ رہیں‌ گی اور وہاں ان کے ساتھ موجود دوسرے شخص کا کام صرف اتنا ہے کہ لیزا کی خواہش پر ان کے لیے فلم دیکھنا یقینی بنائے۔

اس جزیرے پر دراصل “گوتھن برگ فلم فیسٹیول” کا انعقاد کیا گیا ہے جو گیارہ روز تک جاری رہے گا اور دل چسپ بات یہ ہے کہ اس پورے میلے کی واحد فلم بین لیزا اینروتھ ہیں۔

جزیرے کی یہ خاص مہمان اور فیسٹیول کی واحد فلم بین سویڈن میں اپنے ہم وطنوں کے لیے کرونا کی وبا کے دوران ایمرجینسی میں پیشہ وارانہ خدمات انجام دیتی رہی ہیں، جس کی اہمیت کے اعتراف کے طور پر انھیں اس فلم فیسٹیول کا خاص مہمان بنایا گیا ہے۔

شمالی یورپ کا اسکینڈے نیویا کہلانے والا حصہ اور اسکینڈے نیویا کی ریاستیں بھی وبا کی ہلاکت خیزی سے نہیں بچ سکیں، اور ہزارہا ہلاکتوں‌ کے ساتھ وہاں‌ بھی لاکھوں لوگ متاثر ہوئے ہیں۔ ان حالات میں اسکینڈے نیویا کے سب سے بڑے فیسٹیول کو منسوخ کرنے کے بجائے ایک دور دراز جزیرے پر انعقاد کا فیصلہ کیا گیا، جس کے لیے 45 ممالک کے 12 ہزار سے زائد درخواست دہندگان میں سے لیزا کو منتخب کیا گیا‌۔

Comments

یہ بھی پڑھیں