The news is by your side.

Advertisement

حکومت کا کرونا کے مشتبہ مریضوں کو ایران سے واپس لانے کا فیصلہ

اسلام آباد: حکومت نے کرونا کے مشتبہ مریضوں کو ایران سے واپس لانے کا فیصلہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ ایران سے کرونا کے مشتبہ مریضوں کو واپس لایا جائے گا، ذرایع کا کہنا ہے کہ 2028 پاکستانیوں کو ایران سے کوئٹہ منتقل کیا جائے گا۔

ذرایع کے مطابق ایران سے مشتبہ پاکستانی مریضوں کو تافتان بارڈر سے منتقل کیا جائے گا، یہ پاکستانی ایران میں ایک ہفتہ قرنطینہ مکمل کر چکے ہیں، وطن واپسی پر بھی ان مسافروں کو کوئٹہ میں ایک ہفتہ قرنطینہ میں رکھا جائے گا، اس سلسلے میں کوئٹہ میں انتظامات کو حتمی شکل دی جا رہی ہے۔

پاک ایران سرحد 16 ویں روز بھی بند، افغان سرحد کی بندش میں ہفتے کی توسیع

ایران میں دوران قرنطینہ ان پاکستانیوں میں کرونا وائرس کی علامات ظاہر نہیں ہوئیں، پاکستان میں ایک ہفتہ قرنطینہ میں علامات ظاہر نہ ہونے پر انھیں ڈسچارج کر دیا جائے گا۔

خیال رہے کہ پاکستان میں کرونا وائرس کا ایک اور کیس سامنے آ گیا ہے، مریض کا تعلق کراچی سے ہے، چار افراد کے ٹیسٹ کیے گئے تھے جن میں سے ایک کا ٹیسٹ مثبت آیا، پاکستان میں کرونا کے متاثرہ مریضوں کی تعداد 7 ہو گئی ہے، دوسری طرف کرونا کا پہلا مریض صحت یاب ہو کر گھر جا چکا ہے۔

پاک ایران ٹرانزٹ ٹریڈ بھی جزوی طور پر بحال کی گئی ہے، سرحد پر ڈرائیورز کی سخت اسکریننگ کی جا رہی ہے، ایران سے آنے والی گاڑیوں، کنٹینرز اور سامان پر جراثیم کش اسپرے کیے جا رہے ہیں۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں