The news is by your side.

پنجاب بجٹ اجلاس سے قبل اپوزیشن سے معاہدے پر حکومتی ٹیم تقسیم

پنجاب بجٹ اجلاس سے قبل حکومت اور اپوزیشن میں معاہدہ طے پا گیا ہے تاہم حکومتی ٹیم اپوزیشن کے ساتھ معاہدے پر تقسیم ہوگئی ہے۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق پنجاب کے بجٹ اجلاس سے قبل حکومت اور اپوزیشن میں معاہدہ طے پاگیا ہے اور دونوں جانب سے معاہدے کی ابتدائی شرائط پر اتفاق بھی کرلیا گیا ہے تاہم حکومتی ٹیم اپوزیشن کے ساتھ معاہدے پر تقسیم ہوگئی ہے۔

ذرائع نے بتایا ہے کہ حکومت اور اپوزیشن کے درمیان طے پائے جانے والے معاہدے کی تفصیلات بزنس ایڈوائزری کمیٹی میں لکھی گئی ہیں، معاہدے میں طے پائے جانے والے نکات کے مطابق تحریک انصاف کے کارکنوں اور رہنماؤں پر درج مقدمات واپس ہونگے، بجٹ سے قبل آئی جی پنجاب ایڈوائزری کمیٹی کےسامنے پیش ہونگے اور اسمبلی اسٹاف پر درج مقدمات بھی واپس لیے جائیں گے۔

دوسری جانب اپوزیشن سے معاہدے پر حکومتی ٹیم میں دراڑ پڑ گئی ہے اور حکومتی رکن خلیل طاہر سندھو احتجاجاً ایڈوائزری کمیٹی سے واک آؤٹ کرگئے۔

معاہدے سے اختلاف کرنے والے حکومتی رکن خلیل طاہر سندھو نے کا موقف تھا کہ ہم ہر صورت اداروں کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔

ادھر پر معاہدے پر نامزد وزیر قانون ملک احمد اور سیکریٹری اسمبلی محمد خان بھٹی میں بھی ایک نشست ہوئی ہے جب کہ میاں اسلم اقبال نے کہا ہے کہ معاہدے کی تفصیلات لکھ لی گئی ہیں ابھی اس پر دستخط ہونے باقی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں