The news is by your side.

پیٹرول کی قیمت میں اضافے کے بعد عوام پر ایک اور اضافی بوجھ ڈال دیا گیا

اسلام آباد : حکومت نے ڈیزل پر ڈیلر مارجن میں 69.49 فیصد اضافہ کرتے ہوئے 7 روپے فی لیٹر مقرر کردی۔

تفصیلات کے مطابق حکومت نے تیل کی قیمتوں میں عوام کو ریلیف فراہم کرنے کی بجائے ایک اور اضافی بوجھ ڈال دیا۔

حکومت کی جانب سے ڈیزل پر ڈیلر مارجن میں69.49 فیصد کا اضافہ کردیا گیا، ڈیلرز مارجن کی نئی شرح کا اطلاق آج سے ہوگیا ہے۔

ڈیزل پر ڈیلر مارجن 4 روپے 13 پیسے سے بڑھا کر 7 روپے فی لیٹر مقررکردیا گیا ہے، مارجن میں اضافے سے عوام ڈیزل پر2 روپے 87 پیسے کے مزید ریلیف سے محروم ہوگئی۔

حکومت اگر ڈیلر مارجن میں اضافے نہ کرتی تو ڈیزل 3 روپے 38 پیسے فی لیٹر مزید سستا ہوسکتا تھا تاہم مارجن میں اضافے کے باعث حکومت نے ہائی اسپیڈ ڈیزل51 پیسے فی لیٹر سستا کیا۔

اس سے قبل حکومت پٹرول پر پہلے ہی 2 روپے 10 پیسے فی لیٹر ڈیلرزمارجن بڑھاچکی ہے، وفاقی کابینہ نے پٹرول اور ڈیزل پر ڈیلر مارجن بڑھانے کی منظوری دی تھی۔

گذشتہ روز حکومت نے بین الاقوامی منڈی میں پٹرولیم قیمتوں میں مسلسل کمی اور ڈالر کے مقابلے میں روپے کی قدر میں اضافے کے باوجود پٹرول کی قیمت میں چھ روپے باہتر پیسہ اضافہ کردیا تھا۔

جس کے بعد پٹرول 233 روپے91 پیسے فی لٹر ہوگیا ، ہائی اسپیڈ ڈیزل میں صرف اکیاون پیسے فی لٹرکمی کی گئی ،جس کےبعد ڈیزل کی نئی قیمت 244 روپے44 پیسے ہوگئی۔

اسی طرح مٹی تیل ایک روپے سڑسٹھ پیسے کمی سے 199 روپے 40 پیسے فی لٹر اور لائٹ ڈیزل کی قیمت 43 پیسے اضافے کے بعد 191 روپے 75 پیسے فی لٹر ہوگئی ہ

Comments

یہ بھی پڑھیں