The news is by your side.

Advertisement

وزیراعظم کو دھمکی آمیز خط میں نوازشریف کا کردار ؟ تہلکہ خیز انکشافات سامنے آگئے

اسلام آباد : حکومت وزیراعظم عمران خان کو ملنے والے دھمکی آمیز خط کے مندرجات سامنے لے آئی ، جس میں انکشاف کیا گیا ہے کہ مراسلے میں نواز شریف کا کردار ہے اس میں کوئی شک نہیں۔

تفصیلات کے مطابق حکومت نے وزیر اعظم خان کے خلاف بین الاقوامی سازش کا پردہ فاش کر دیا، وفاقی وزرا اسد عمر نے وزیراطلاعات فواد چوہدری کے ہمراہ پریس کانفرنس کی۔

اسد عمر نے کہا کہ وزیراعظم کی تقریر سننے کیلئےاسلام آبادمیں لاکھوں لوگ پہنچے ، اس دن واقعی نظرآیا قوم کپتان کےساتھ کھڑی ہے ، شکریہ اداکرتاہوں۔

وفاقی وزیر نے دھمکی آمیز خط کے حوالے سے بتایا کہ وزیراعظم نے تقریر میں مراسلے کا ذکر کیا تھا، مراسلے سے نظرآتاہے کہ بیرونی ہاتھ بھی عدم اعتماد تحریک میں شامل ہے، قومی راز بہت سنجیدہ نوعیت کے ہوتے ہیں، واضح قوانین بھی موجود ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ دھمکی آمیزخط ایک حقیقت ہے میں خود اس کو دیکھ چکاہوں، وزیراعظم تیار ہیں وہ سوچ رہے ہیں، کس کے ساتھ خط شیئر کریں، اگر کسی کو شک ہے توسپریم کورٹ کے چیف جسٹس کو خط دکھا سکتے ہیں، مراسلہ چیف جسٹس کے سامنے رکھنے کیلئے وزیراعظم تیار ہیں۔

اسد عمر نے بتایا کہ خط کی تاریخ عدم اعتماد کی تحریک پیش ہونےسے پہلے کی ہے ، خط کا وہ حصہ جو عدم اعتماد سے جڑتا ہے اس کی حیثیت کیا ہے، خط میں براہ راست عدم اعتماد کی تحریک کا ذکر ہے۔

وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ یہ مراسلہ عدم اعتماد کی تحریک پیش ہونے سے پہلے لکھا گیا ، مراسلے میں لکھا ہے کہ عدم اعتماد کی تحریک آرہی ہے ، عدم اعتماد کامیاب نہ ہوئی اور عمران خان وزیراعظم برقرار رہے تو خوفناک نتائج آسکتے ہیں۔

انھوں نے مزید کہا کہ یہ مراسلہ وزیراعظم عمران خان کے منصب پر بیٹھنے سے براہ راست جڑا ہے، اس مراسلے میں کیا ہے یہ اعلیٰ سول و عسکری قیادت تک محدود ہے لیکن لوگوں کی تسلی کیلئے مراسلہ چیف جسٹس سپریم کورٹ کے سامنے رکھنے کو تیار ہیں۔

اسد عمر نے خط کے حوالے سے بتایا کہ مراسلے میں جوباتیں ہیں وہ پاکستان کی خارجہ پالیسی سے جڑی ہے ، اس مراسلے سے واضح ہے یہ پیغام عدم اعتماد سے جڑاہواہے، مراسلے سے واضح ہے بیرونی ہاتھ اور عدم اعتماد کی تحریک آپس میں ملے ہوئے ہیں۔

خط کے کرداروں سے متعلق وفاقی وزیر نے کہا کہ مراسلے میں کردار کون کون ہے یہ بہت اہم بات ہے، مراسلے میں نوازشریف کا کردار ہے اس میں کوئی شک نہیں، مراسلے کے ایک کردار میں نوازشریف واضح طورپر شامل ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم ظاہر ہے اس بات سے لاعلم نہیں ہے ، پی ڈی ایم کو بھی پتہ ہے اس مراسلے اورعدم اعتماد تحریک کا کیا تعلق ہے۔

اسد عمر نے کہا کہ یہ قومی مسئلہ ہے یہ بہت بڑی چیز سامنے آئی ہے،وزیراعظم کو عوام نے منتخب کیاہے، وزیراعظم چاہتے تھے کہ عوام تک بھی مراسلہ کی کچھ تفصیلات پہنچائیں، وزیراعظم کا خیال ہے کہ عوام کو آگاہ کیاجائے کہ ہو کیارہا ہے۔

وفاقی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ زیادہ تر اراکین کونہیں معلوم عدم اعتماد کی تحریک کے پیچھے کیا عناصر ملوث ہیں ، تمام حقائق سامنے آنے کے بعد ارکان اسمبلی اس بارے میں ضرورسوچیں گے، ابھی تو لاعلمی کے اندر قومی اسمبلی کے اراکین اس کھیل کا حصہ ہیں امید ہے اراکین اسمبلی سوچیں گے کہ اس کھیل کا حصہ کیوں ہیں اور حقائق سامنے رکھ کر فیصلہ کریں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں