The news is by your side.

پولیس کا 77 سالہ خاتون کے گھر پر چھاپہ، خاتون نے پولیس کو عدالت میں گھسیٹ لیا

امریکا میں پولیس نے ہتھیار رکھنے کے شبہ میں ایک 77 سالہ بزرگ خاتون کے گھر چھاپہ مارا اور انہیں ہراساں کیا، خاتون نے پولیس افسر کے خلاف مقدمہ دائر کردیا۔

امریکی میڈیا کے مطابق یہ واقعہ ریاست کولوراڈو کے شہر ڈینور میں پیش آیا، جہاں پولیس کی ایس ڈبلیو اے ٹی (اسپیشل ویپنز اینڈ ٹیکٹکس) ٹیم نے بھاری اسلحے سے لیس ہو کر خاتون کے گھر پر دھاوا بول دیا۔

77 سالہ روبی جانسن کا کہنا ہے کہ پولیس نے ان کے گھر میں توڑ پھوڑ کی اور سامان پھینکا، پولیس نے اندر داخل ہونے کے لیے گیراج کا دروازہ توڑا۔

ڈینور پولیس کا کہنا ہے کہ پولیس کی خصوصی ٹیم ایک ٹرک تلاش کر رہی تھی جس میں مبینہ طور پر فوجی رائفل سمیت 6 ہتھیار، 2 ڈرونز، 4 ہزار ڈالرز کیش اور ایک آئی فون موجود تھا۔

فائنڈ مائی آئی فون ایپ کے ذریعے جو لوکیشن موصول ہوئی وہ روبی جانسن کا گھر تھا اور پولیس کے مطابق اسلحہ اسی گھر میں موجود تھا۔

مذکورہ خاتون کا کہنا ہے کہ پولیس کے چھاپے سے وہ بے حد ذہنی اذیت اور خوف کا شکار ہوئیں اور ان کی توڑ پھوڑ سے جذباتی و مالی طور پر پہنچنے والا نقصان الگ تھا۔

خاتون نے پولیس ٹیم کے سربراہ گرے اسٹیب کے خلاف مقدمہ درج کروا دیا ہے۔

اپنی درخواست میں انہوں نے لکھا کہ وہ تاحال شاک کی کیفیت میں ہیں اور گھر واپس نہیں جاسکتیں، واقعے کے بعد انہیں اس گھر سے منتقل ہونا پڑا اور تاحال وہ واپس جانے سے خوفزدہ ہیں۔

ڈینور پولیس نے خاتون سے معذرت بھی طلب کی ہے اور تفتیشی کارروائی میں بھرپور تعاون کی یقین دہانی کروائی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں