قومی ادارہ صحت کی کانگو وائرس سے متعلق گائیڈ لائنز جاری -
The news is by your side.

Advertisement

قومی ادارہ صحت کی کانگو وائرس سے متعلق گائیڈ لائنز جاری

اسلام آباد: قومی ادارہ صحت نے کانگو وائرس سے متعلق گائیڈ لائنز جاری کردیں۔

تفصیلات کے مطابق عید قرباں سے پہلے کانگو وائرس کے پھیلاؤ کے خدشہ کے تحت قومی ادارہ صحت نے کانگو وائرس سے متعلق گائیڈ لائنز جاری کردیں۔

گائیڈ لائنز کے مطابق کانگو بخار خطرناک نیرو نامی وائرس سے پھیلتا ہے۔ کانگو مویشی کی کھال سے چپکی چیچڑوں میں پایا جاتا ہے، چیچڑی کے کاٹنے سے وائرس انسان کو منتقل ہوتا ہے۔

مزید پڑھیں: کانگو وائرس کی علامات اور احتیاطی تدابیر

قومی ادارہ صحت کے مطابق نیرو وائرس صرف انسانوں میں کانگو بخار پھیلاتا ہے۔ نیرو وائرس انسانی خون، تھوک اور فضلات میں پایا جاتا ہے۔

قومی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ تیز بخار، کمر، پٹھوں، گردن میں درد، قے، متلی، گلے کی سوزش اور جسم پر سرخ دھبے کانگو کی علامات ہیں۔

گائیڈ لائنز کے مطابق بچوں کو مویشی منڈی لے جانے سے گریز کیا جائے، قربانی کے وقت ہاتھوں پر دستانوں کا استعمال کریں۔ کانگو وائرس کی ویکسین تا حال ایجاد نہیں ہوئیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں