The news is by your side.

Advertisement

موٹروے زیادتی کیس، وقار الحسن کو پولیس نے رہا کردیا، عابد علی تاحال مفرور

لاہور: پنجاب پولیس نے گجرپورہ زیادتی کیس میں گرفتار ہونے والے شخص وقار الحسن کو بے گناہی ثابت ہونے پر رہا کردیا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق گجر پورہ زیادتی کیس میں پولیس نے ملزم وقار الحسن کو 17 روز قبل حراست میں لیا تھا جس نے تفتیش کے دوران ملزم شفقت ہی کا نام بتایا اور پھر نشاندہی کے بعد اُسے گرفتار کیا گیا۔

وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے وقار الحسن کی گرفتاری پر 25 لاکھ روپے انعام بھی مقرر کیا تھا۔

پولیس نے مؤقف دیا کہ وقار الحسن کو بے گناہ ثابت ہونے پر رہا کیا گیا جبکہ کیس کامرکزی ملزم عابد گرفتار نہ ہوسکا۔ یاد رہے کہ پولیس نے عابد علی کو گرفتار کرنے کے بعد اُس سے رابطہ رکھنے والے پانچ رشتے داروں کو بھی قصور سے حراست میں لیا تھا۔ اس سے قبل پولیس نے کارروائی کرتے ہوئے مرکزی ملزم عابد علی کی اہلیہ کو حراست میں لیا تھا۔

مزید پڑھیں: گجرپورہ زیادتی کیس: آٹھ اسپیشل ٹیمیں بھی مرکزی ملزم عابد کا سراغ لگانے میں ناکام

واضح رہے کہ چند روز قبل رات کو دو بجے کے قریب گجرپورہ کے قریب موٹروے پر خاتون کو اس کے بچوں کے سامنے تشدد اور اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کا واقعہ پیش آیا تھا۔ جس پر پورے ملک سے شدید ردعمل آیا تھا۔

پولیس تاحال مرکزی ملزم عابد علی کو گرفتار کرنے میں ناکام ہیں، وزیراعلیٰ کی ہدایت پر مرکزی ملزم کی گرفتاری کے لیے 8 خصوصی ٹیمیں تشکیل دی گئیں جو ملزم کے قریب پہنچ گئیں تھیں مگر وہ چکما دے کر فرار ہوگیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں