The news is by your side.

Advertisement

چیف جسٹس نے امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان کوجھاڑپلادی

کراچی: نسلہ ٹاور عملدرآمد کیس میں امیر جماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان کو چیف جسٹس نے جھاڑ پلادی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں نسلہ ٹاور عملدرآمد کیس کے موقع پر امیرجماعت اسلامی کراچی حافظ نعیم الرحمان عدالت میں پیش ہوئے اور روسٹرم پر آکر بولنے کی کوشش کی۔

اس موقع پر چیف جسٹس نے ان سے استفسار کیا کہ آپ کون ہیں؟ جواب میں حافظ نعیم نے کہا کہ میں امیر جماعت اسلامی کراچی ہوں، سر مجھےتھوڑا سن لیں، جس پر چیف جسٹس نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ آپ کا کیا انٹرسٹ ہے ؟ یہاں تقریر نہ کریں آپ کا کیس نہیں ہے، ہٹیں یہاں سے،یہاں کوئی سیاسی تقریر کی اجازت نہیں۔

چیف جسٹس نےحافظ نعیم الرحمان کوروسٹرم سےہٹادیا اس موقع پر امیر جماعت اسلامی حافظ نعیم کا کہنا تھا کہ میں معاوضےکی بات کرناچاہتا ہوں، تو قاضی محمد امین احمد نے کہا کہ پلیز،کوئی بات نہیں،یہاں سےہٹ جائیں پلیز۔

بعد ازاں میڈیا سے گفتگو میں حافظ نعیم الرحمان کا کہنا تھا کہ کراچی کےبنیادی مسائل پربات کرنا چاہتے ہیں، میں نے بات کرنےکی کوشش کی تو کہا گیاتوہین عدالت لگ سکتا ہے، ہم صرف نسلہ ٹاور نہیں جتنےمتاثرین ہیں انکےلئےجدوجہدکرینگے۔

حافظ نعیم کا مزید کہنا تھا کہ ہم اس وقت عدالتوں میں گئےتھےلیکن کوئی شنوائی نہیں ہوسکی، ماضی میں کراچی کی کمیونٹی زمینوں پر ایم کیوایم،پی پی والےقبضےکیا کرتےتھے اب ایم کیوایم اورپیپلزپارٹی تعصب کی کوشش کررہی ہیں۔

حافظ نعیم کا کہنا تھا کہ کراچی کے بڑے بڑے مسائل پر عرصہ دراز سےکیسز موجود ہیں، مردم شماری پر کچھ نہیں ہورہا کےالیکٹرک پر کوئی ایکشن نہیں لیاجارہا،کراچی میں جعلی ڈومیسائل بناکرملازمتوں سےمحروم کیاجارہاہے۔

سپریم کورٹ کراچی رجسٹری کے باہر میڈیا سے گفتگو میں امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ یہاں پر ایک دو پلاٹس کو سامنےرکھ کرکیسزچلائےجارہےہیں، بیوروکریسی، وڈیروں جاگیرداروں کو بھی پکڑا جائے،سارا نزلہ ان پر گرتاہےجو اپنی جمع پونجی لگاکرگھرخریدتےہیں۔

حافظ نعیم الرحمان کا کہنا تھا کہ آپ صرف کمزوروں کااحتساب کررہےہیں، ڈنکےکی چوٹ پربات کی ہےآئندہ بھی کروں گا، شاخوں کوکاٹنےسےمسئلہ حل نہیں ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں