The news is by your side.

Advertisement

پاکستانی کرکٹ ٹیم نے نیوزی لینڈ میں قرنطینہ کے دوران کیسے وقت گزارا؟

ویلنگٹن: پاکستانی کرکٹ ٹیم کے کھلاڑی حیدر علی کا کہنا ہے کہ آئیسولیشن کا وقت خاصا مشکل تھا، ہم کمروں میں ہی ہلکی پھلکی ٹریننگ کرتے رہے، شکر ہے مشکل وقت گزر گیا۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان ٹی 20 اسکواڈ میں شامل نوجوان بیٹسمین حیدر علی کا کہنا ہے کہ نیوزی لینڈ کے خلاف سیریز کی تیاری کا موقع کرونا وائرس کی وجہ سے کم ملا لیکن کم وقت میں اچھی تیاری کر رہے ہیں۔

کوئنز ٹاؤن سے ورچوئل پریس کانفرنس کرتے ہوئے حیدر علی نے کہا کہ وہ پہلی بار نیوزی لینڈ کا دورہ کر رہے ہیں، پریکٹس میچز گرین وکٹ پر کھیل رہے ہیں تاکہ میچز میں کوئی مشکل نہ آئے۔

حیدر علی نے بتایا کہ آئیسولیشن کا وقت خاصا مشکل تھا، ہم کمروں میں ہی ہلکی پھلکی ٹریننگ کرتے رہے، شکر ہے مشکل وقت گزر گیا، اب وقت کم ہے اور مقابلہ سخت ہے۔

انہوں نے کہا کہ ٹی 20 اسکواڈ میں شامل سینئر کھلاڑی جونیئرز کو بہت سپورٹ کر رہے ہیں، پریکٹس کے دوران بیٹنگ پر خاص توجہ دی جارہی ہے۔

حیدر علی کا مزید کہنا تھا کہ میرا ہدف ہے کہ تینوں فارمیٹ میں پاکستان کی نمائندگی کروں، ٹی 20 نہیں بلکہ ون ڈے اور ٹیسٹ کرکٹ بھی کھیلنا چاہتا ہوں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں