چھ ممبران کی معطلی کا فیصلہ واپس لینے تک اسمبلی میں نہیں جائیں گے، حمزہ شہباز -
The news is by your side.

Advertisement

چھ ممبران کی معطلی کا فیصلہ واپس لینے تک اسمبلی میں نہیں جائیں گے، حمزہ شہباز

لاہور : مسلم لیگ ن کے رہنما حمزہ شہباز شریف نے کہا ہے کہ چھ ممبران کی معطلی کا فیصلہ واپس لینے تک اسمبلی میں نہیں جائیں گے، ضمنی الیکشن میں عمران خان نئے پاکستان کا مقدمہ ہار چکے ہیں۔

ان خیالات کا اظہارانہوں نے پنجاب اسمبلی کے باہر چھ ن لیگی ارکان کی نااہلی کے خلاف دھرنے سے خطاب کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ قوم اسپیکر پنجاب اسمبلی کا تماشا دیکھ رہی ہے، اسپیکر سے کہتا ہوں کہ غیرجانبداری کا مظاہرہ کریں۔

آج میرے خلاف قرارداد جمع کرائی گئی، اسپیکر کے من پسند سیکریٹری کے بھتیجے نے میرے خلاف درخواست جمع کرائی، انہوں نے کہا کہ عمران خان کہتے ہیں کہ اپوزیشن میں مجرم بیٹھے ہیں بیورو کریسی اور پولیس کام خراب کررہی ہے جبکہ وفاقی کابینہ میں بیٹھے لوگوں پر بھی کئی کیسز ہیں۔

اب قوم پر سب کچھ عیاں ہوگیا ہے، یہ کھلاڑی بھی نہیں، اناڑی لوگ ہیں، ملک کیسے چلائیں گے؟ ضمنی الیکشن میں شکست پر عمران خان نئے پاکستان مقدمہ ہارچکے ہیں۔

اپوزیشن لیڈر پنجاب اسمبلی کا مزید کہنا تھا کہ عمران خان غریبوں سے روزگار چھین رہے ہیں، اسپیکر کی رولنگ سے پہلے کمیٹی بنتی ہے اور انکوائری ہوتی ہے، اسپیکر نے کارروائی کردی مگر ہم جعلی کارروائی نہیں مانتے، چھ ممبران کی معطلی کافیصلہ واپس لینے تک اسمبلی میں نہیں جائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کرسی پر بیٹھ کر نہیں بنا جاتا وہ عوام کے دلوں پر راج کرتا ہے، عوام نے ضمنی الیکشن میں جعلی مینڈیٹ والی حکومت کومسترد کردیا، ہمیں پاکستان کی فکر ہے، جعلی مینڈیٹ کیخلاف سب کو مل بیٹھنا ہے، مولا جٹ اور نوری نت کے نعروں سے ڈرنے والے نہیں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں